உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    ماس ویکسینیشن کی مہم ’سنجیونی: ایک ٹیکہ زندگی کا‘ مہم کا ترانہ لانچ ، ان شخصیات نے کی شرکت

    ماس ویکسینیشن کی مہم ’سنجیونی: ایک ٹیکہ زندگی کا‘ مہم کا ترانہ لانچ ، ان شخصیات نے کی شرکت

    Sanjeevani: A Shot Of Life : تقریب کی میزبانی آنند نرسمہن نے کی، ترانہ مہم کے سفارت کار سونو سود اور کمپوزر شنکر مہادیون نے مرکزی وزیر برائے صحت ڈاکٹر ہرش وردھن اور دیگر اہم شخصیات کی موجودگی میں ریلیز کیا۔

    • Share this:
    اپنے آپ میں یکتا ایک ڈیجیٹل پیش قدمی میں، ہندوستان کی سب سے بڑی ویکسینیشن بیداری ڈرائیو ’سنجیونی: ایک ٹیکہ زندگی کا‘ کو بین الاقوامی یوگا ڈے کے موقع پر لانچ کیا گیا۔ اس تقریب کی میزبانی آنند نرسمہن نے کی، ترانہ مہم کے سفارت کار سونو سود اور کمپوزر شنکر مہادیون نے مرکزی وزیر برائے صحت ڈاکٹر ہرش وردھن اور دیگر اہم شخصیات کی موجودگی میں ریلیز کیا۔

    حالات موجودہ کو نئے معمول کے طور پر قبول کرتے ہوئے، اس ترانے کا آغاز اتنے بڑے پیمانے پر ایک انتہائی تحریک دینے والی ورچوئل تقریب میں کیا گیا۔ اس شاندار ڈیجیٹل تقریب میں کمپوزرز، نغمہ نگاروں اور مختلف شعبہ ہائے زندگی کی دیگر بااثر شخصیات نے شرکت کی۔

    Network18 سنجیونی ۔ ایک ٹیکہ زندگی کا Federal Bank کی ایک ایسی CSR پیش قدمی ہے جسے اس سال عالمی یوم صحت کے موقع پر لانچ کیا گیا۔ مہم کا مقصد Covid-19 ویکسینیشنز سے متعلق بیداری پیدا کرنا اور اس سے وابستہ کاوشوں کو تحریک دینا ہے تاکہ ہر ہندوستانی کے ویکسینیشن کو یقینی بنایا جائے۔ اب تک، سنجیونی گاڑی ناسک، گنتور، دکشن کنّڑ، امرتسر اور اندور میں تقریباً 100,000 سے زیادہ لوگوں تک پہنچ چکی ہے۔

    اب اس پُرکشش دھن ’’جب اپنی باری آئے ٹیکہ لگا‘‘ کے ساتھ، مہم کا ترانہ ہر ہندوستانی سے ٹیکہ لگوانے کی درخواست کر رہا ہے۔ شنکر مہادیون نے شیوم مہادیون، سدھارتھ مہادیون اور ہرش دیپ کور کے ساتھ مل کر اسے کمپوز کیا ہے جبکہ یہ ترانہ تنشک نبار نے تحریر کیا ہے۔

    ویکسینیشن کی اہمیت پر زور دیتے ہوئے، تقریب میں شامل اہم شخصیات نے ہر کسی کے ویکسین لگوانے کی ضرورت کی بات کو دہرایا۔ اس وقت جبکہ ملک اب بھی دوسری لہر کے قہر سے ابھر رہا ہے اور تیسری لہر کی آمد کی تیاریوں میں مصروف ہے، ہر ایک اس بات پر متحد ہے کہ بڑے پیمانے پر ویکسینیشن کروانا ہی اس وبا سے لڑنے کا واحد طریقہ ہے۔

    ’ترانہ‘

    مختلف پیش قدمیوں کے ذریعے عوام الناس کو ویکسین لگوانے کی ترغیب دے کر، ’سنجیونی‘ COVID-19 سے پرے عام زندگی سے متعلق امید پیدا کر رہی ہے۔ عام فہم گانے اور مسحور کرنے والی دھن کے ساتھ، مہم کا ترانہ یقینی طور پر سوشل میڈیا پلیٹ فارمز پر وائرل ہونے والا ہے۔ یہ موسیقی فوری طور پر لوگوں کی توجہ اپنی طرف مبذول کروائے گی اور یقیناً لوگ اس گانے میں پیش کئے جانے والے پیغام پر توجہ دیں گے۔ اس مشکل وقت میں یہ دھن لوگوں کو مسرت بخشے گی اور ٹیکہ لگوانے کیلئے ان میں ایک مثبت تحریک پیدا کرے گی۔

    ’بین الاقوامی یوگا ڈے اور ترانے کی لانچنگ‘

    ترانے کو بین الاقوامی ڈے کے موقع پر لانچ کیا گیا۔ یہ بات اسلئے اہمیت کی حامل ہے کیونکہ یوگا اور ویکسین دونوں ہی مدافعتی نگہداشت کی علامت ہیں۔ جس طرح یوگا کو اجتماعی صحت کو جِلا بخشنے والا خیال کیا جاتا ہے، اسی طرح موجودہ وقت میں ویکسینیشن کو صحت اور بہبود کی گارنٹی تصور کیا جاتا ہے۔

    جس طرح یوگا ایک عالمی مظہر بن گیا ہے، اسی طرح ’سنجیونی‘ نے قومی توجہ حاصل کرنے کو اپنا ہدف بنایا ہے۔ یہ لوگوں کو یہ بات یاد دلاتی ہے ہر شخص اس وقت تک محفوظ نہیں ہے، جب تک سارے محفوظ نہ ہوں۔ حال ہی میں لانچ ہونے والا ترانہ ملک کے ہر گلی کوچے تک پہنچنے کی ایک کوشش ہے۔ یہ مہم کی آواز ہے تاکہ لوگوں میں یہ پیغام عام کیا جا سکے کہ ویکسینیشن COVID-19 کا واحد حل ہے۔ تمام لوگوں تک ویکسینیشن پہنچا کر، مہم لوگوں کو جادوئی ’سنجیونی‘ یعنی ان کی زندگی کا ٹیکہ عطا کرے گی۔ #TikaLagayaKya
    Published by:Imtiyaz Saqibe
    First published: