ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

عیدالاضحیٰ سے متعلق مولانا محمد رحمانی نے کیا یہ اعلان، جامعہ اسلامیہ سنابل کی عیدگاہ سے متعلق وضاحت

ابوالکلام آزاد اسلامک اویکننگ سینٹر، نئی دہلی کے صدر مولانا محمد رحمانی مدنی نے عیدالاضحیٰ سے متعلق وضاحت نامہ جاری کرتے ہوئے کہا ہے کہ حالات  انتہائی تشویشناک ہیں، ایسے حالات میں صلاۃ عیدالاضحیٰ کے لئے بھیڑ بھاڑ جمع کرنا قطعی مناسب نہیں ہے، اس وجہ سے انتظامیہ اپنے نمازیوں سے معذرت کرتی ہے۔

  • Share this:
عیدالاضحیٰ سے متعلق مولانا محمد رحمانی نے کیا یہ اعلان، جامعہ اسلامیہ سنابل کی عیدگاہ سے متعلق وضاحت
ابوالکلام آزاد اسلامک اویکننگ سینٹر، نئی دہلی کے صدر مولانا محمد رحمانی مدنی نے عیدالاضحیٰ سے متعلق وضاحت نامہ جاری کرتے ہوئے کہا ہے کہ حالات  انتہائی تشویشناک ہیں، ایسے حالات میں صلاۃ عیدالاضحیٰ کے لئے بھیڑ بھاڑ جمع کرنا قطعی مناسب نہیں ہے، اس وجہ سے انتظامیہ اپنے نمازیوں سے معذرت کرتی ہے۔

نئی دہلی: ابوالکلام آزا اسلامک اویکننگ سینٹر، نئی دہلی کے تعلیمی ادارہ جامعہ اسلامیہ سنابل کے میدان میں ہر سال پورے اہتمام کے ساتھ ہزاروں مسلمان عیدین کی نماز کے لئے حاضر ہوتے ہیں۔ خاص بات یہ ہےکہ ہزاروں کی تعداد میں خواتین اور بچے بھی شرکت کرتے ہیں۔ دہلی کے مختلف علاقوں سے لوگ اپنی فیملی کے ساتھ بڑی تعداد میں حاضر ہوتے ہیں، لیکن اس مرتبہ ایسا ممکن نہیں ہوسکے گا۔ کورونا بحران اور لاک ڈاون کی وجہ سے عبادت گاہوں میں چند افراد ہی عبادت کے لئے جمع ہوسکتے ہیں، ایسے میں عیدگاہ میں بھی لوگ نہیں جمع ہوسکیں گے۔


ابوالکلام آزاد اسلامک اویکننگ سینٹر، نئی دہلی کے صدر مولانا محمد رحمانی مدنی، جو عیدین کے خطیب بھی ہیں، انہوں نے وضاحت نامہ جاری کیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ عیدالفطر میں مکمل لاک ڈاون کی وجہ سے نماز عید دہلی میں نہیں ہوئی تھی اور مساجد بھی 8 جون تک مسلسل بند تھیں جبکہ ابتدائی ایام میں کورونا وائرس کے کیس بہت کم تھے، پھر مساجد کو کھولنے کی اجازت دی دے گئی اور اکثر مساجد کھول بھی دی گئیں، لیکن سنٹر نے اپنی مساجد کو نہ کھولنے کا فیصلہ کیا تھا کیونکہ اس وقت اموات کے اعدادوشمار میں بھی اضافہ ہوگیا تھا۔  انہوں نے کہا کہ حالات ابھی بھی انتہائی تشویشناک ہیں، ایسے حالات میں صلاۃ عیدالاضحیٰ کے لئے بھیڑ بھاڑ جمع کرنا قطعی مناسب نہیں ہے، اس وجہ سے انتظامیہ اپنے نمازیوں سے معذرت کرتی ہے اور مسلمانوں سے اپیل کرتی ہے کہ وہ اپنی صحت کے تحفظات کو یقینی بنائیں اور شریعت اسلامیہ کی تعلیمات کی روشنی میں اس بات کی گنجائش بھی ہے بلکہ اسلام ہمیں اپنی جان ومال کے تحفظ پر تاکید کے ساتھ ابھارتا ہے۔


مولانا محمد رحمانی مدنی نے کہا ہے کہ تشویشناک حالات میں عیدگاہ میں جمع ہونا قطعی مناسب نہیں ہے، اس لئے اپنی صحت کے تحفظات کو یقینی بنائیں۔
مولانا محمد رحمانی مدنی نے کہا ہے کہ تشویشناک حالات میں عیدگاہ میں جمع ہونا قطعی مناسب نہیں ہے، اس لئے اپنی صحت کے تحفظات کو یقینی بنائیں۔


جامعہ اسلامیہ سنابل عید گاہ کے خطیب مولانا محمد رحمانی سنابلی مدنی نے مزید کہا کہ ہمارے پاس کثرت سے فون آرہے ہیں کہ عیدالاضحیٰ کی نماز کا کیا کیا جائے؟ اس وجہ سے یہ وضاحت کی جارہی ہے اور اللہ تعالیٰ سے دعا ہےکہ اس مصیبت اور مہاماری سے جلد نجات ملے اور وطن عزیز کو بھی جلد نجات حاصل ہو اور ہمارے لئے جلد سے جلد ایسے حالات بن سکیں کہ ہم شریعت کی مکمل پابندی کرتے ہوئے مساجد کو پھر سے آباد کرسکیں۔ مولانا رحمانی نے عالم اسلام کو عیدالاضحیٰ کی مبارکباد پیش کرتے ہوئے اندر قربانی کے ذریعہ ایثار کا جذبہ کرنے کی اپیل کی۔ انہوں نے مسلمانوں سے یہ بھی اپیل کی ہے کہ وہ عید کی نماز اپنے گھروں میں ادا کریں۔
Published by: Nisar Ahmad
First published: Jul 29, 2020 08:10 AM IST