ہوم » نیوز » مشرقی ہندوستان

امارت شرعیہ نے کی ایس سی ، ایس ٹی اور او بی سی کی حمایت ، مولانا ولی رحمانی نے دیا یہ بڑا بیان

مولانا ولی رحمانی کے مطابق بی جے پی اور آر ایس ایس ہمیشہ سے ریزرویشن کے خلاف رہی ہے اور ایسا لگتا ہے کہ یہ فیصلہ مرکز کی بی جے پی حکومت کے دباؤ میں دیا گیا ہے۔

  • Share this:
امارت شرعیہ نے کی ایس سی ، ایس ٹی اور او بی سی کی حمایت ، مولانا ولی رحمانی نے دیا یہ بڑا بیان
ایس سی ، ایس ٹی اور او بی سی کی حمایت میں آیا امارت شرعیہ ، مولانا ولی رحمانی نے دیا یہ بڑا بیان

امارت شرعیہ بہار کے امیر شریعت مولانا ولی رحمانی نے پٹنہ میں میڈیا سے بات کرتے ہوئے کہا کہ ایس سی ایس ٹی اور او بی سی کے لیے ریزرویشن پر سپریم کورٹ کا فیصلہ ان طبقات کی صورتحال کے خلاف ہے ۔ مولانا ولی رحمانی کے مطابق ہندوستان کے آئین سازوں نے سماجی ، معاشی ، تعلیمی اور تہذیبی اعتبار سے کمزور ، دبے کچلے اور صدیوں سے طاقتوروں کے ظلم کے شکار لوگوں کو انصاف دینے اور انہیں سماج میں برابری کا موقع دینے کے لئے آئین میں ایسے لوگوں کے لئے تعلیم ، ملازمت اور سیاست میں ریزرویشن کا ضابطہ شامل کیا تھا۔ اب یہ راستہ بند کیا جائے گا ، تو ہندوستانی معاشرہ ایک مرتبہ پھر اسی عدم مساوات اور ظلم و جبر کی طرف چل پڑے گا ۔


مولانا ولی رحمانی کے مطابق بی جے پی اور آر ایس ایس ہمیشہ سے ریزرویشن کے خلاف رہی ہے اور ایسا لگتا ہے کہ یہ فیصلہ مرکز کی بی جے پی حکومت کے دباؤ میں دیا گیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ حکومت کی ذمہ داری ہے کہ ریزرویشن کے تحفظ کے لئے ٹھوس اقدامات اٹھائے اور اس کیلئے پارلیمنٹ سے مضبوط قانون پاس کرے ۔ تاکہ ریزرویشن محفوظ ہوسکے اور اس کو کسی طرح سے چلینج نہ کیا جاسکے۔


مولانا ولی رحمانی نے واضح کیا کہ ملک کی آزادی کے بعد سے ہی دلت اور مسلمانوں کا مسلسل استحصال ہوتا رہا ہے ۔ غریب اور دلتوں کے حقوق کی حفاظت حکومت کی ذمہ داری ہے ، لیکن حکومت نے خود جان بوجھ کر دلت اور مسلمانوں کے حقوق کو چھیننے کی کوشش کی ہے۔  مولانا ولی رحمانی کے مطابق سی اے اے ، این پی آر اور این آر سی کے خلاف احتجاج میں دلتوں کا یہ مسئلہ بھی شامل کیا جائےگا ۔ انہوں نے کہا کہ امارت شرعیہ ہمیشہ سے ہی کمزوروں کے ساتھ کھڑی رہی ہے ۔ امارت نے فیصلہ کیا ہے کہ دلتوں کے حقوق کی لڑائی میں امارت ان کے ساتھ کھڑی رہے گی ۔

First published: Feb 23, 2020 10:38 PM IST