اپنا ضلع منتخب کریں۔

    کانگریس ارکان اسمبلی کی میٹنگ آج شملہ میں، ہوسکتا ہے نئے وزیراعلیٰ کے نام کا اعلان

    کانگریس ارکان اسمبلی کی میٹنگ آج شملہ میں، ہوسکتا ہے نئے وزیراعلیٰ کے نام کا اعلان. (File Photo-twitter@INCHimachal)

    کانگریس ارکان اسمبلی کی میٹنگ آج شملہ میں، ہوسکتا ہے نئے وزیراعلیٰ کے نام کا اعلان. (File Photo-twitter@INCHimachal)

    ہماچل میں ایک خیمہ کانگریس کی تشہیری کمیٹی کے سربراہ سوکھیندر سنگھ سوککھو کی قیادت میں ابھر چکا ہے۔ یہاں پر کانگریس کا دوسرا خیمہ وہ ہے، جس کا مرکز ’ہالی لاج‘ ہے۔

    • News18 Urdu
    • Last Updated :
    • Shimla, India
    • Share this:
      کانگریس نے جمعہ کو شملہ میں نئے ارکان اسمبلی کی میٹنگ طلب کی ہے۔ اس میں نئے وزیراعلیٰ کے لیے کانگریس صدر کو اختیار دیا جائے گا۔ میٹنگ میں ہماچل انچارج راجیو شکلا اور سوپر وائزرس بھی پہنچیں گے۔ فی الحال، سی ایم کی دعویداری کے لیے تشہیری کمیٹی کے سربراہ سوکھویندر سنگھ سوککھو اور سابق سی ایم آنجہانی ویربھدر سنگھ کی اہلیہ پرتبھا سنگھ کے نام سامنے آرہے ہیں۔

      کانگریس نے اسمبلی انتخابات میں اکثریت سے جیت تو حاصل کرلی ہے، مگر سب سے بڑا سوال اب یہ ہے کہ وزیراعلیٰ کون ہوگا۔ فی الحال ہماچل پردیش میں وزیراعلیٰ کے عہدے کی دعویداری میں کانگریس کے دو خیموں میں لڑائی بڑھے گی۔ ہماچل میں ایک خیمہ کانگریس کی تشہیری کمیٹی کے سربراہ سوکھیندر سنگھ سوککھو کی قیادت میں ابھر چکا ہے۔ یہاں پر کانگریس کا دوسرا خیمہ وہ ہے، جس کا مرکز ’ہالی لاج‘ ہے۔ ہالی لاج، سابق وزیراعلیٰ آنجہانی ویربھدر سنگھ کی قیام گاہ ہے، ان کی اہلیہ پرتبھا سنگھ خود وزیراعلیٰ کے عہدے کی دعویداری میں کھڑی ہوچکی ہے۔

      یہ بھی پڑھیں:
      Himachal Result: ان 5 وجوہات سے کانگریس کو ہماچل میں ملی جیت، چل گیا پرینکا گاندھی کا جادو

      یہ بھی پڑھیں:
      دو دہائیوں میں مودی جی کی قیادت میںBJP نے گجرات میں ترقی کے تمام ریکارڈ توڑ دیے: امت شاہ

      اس بار، ریاست میں بے شک اسمبلی انتخابات ویربھدر سنگھ کے بغیر ہوئے، جو کانگریس کی پچھلی حکومتوں میں لگاتار چھ بار وزیر اعلیٰ رہے، اس کے باوجود، اس انتخاب میں کانگریس نے ویربھدر کی موت کے بعد انہیں دی گئی تعزیت کا فائدہ اٹھانے کی اپنی پوری کوشش کی۔ پرتیبھا سنگھ کو نہ صرف کانگریس کا ریاستی صدر بنایا گیا بلکہ ان کا نام بدل کر پرتیبھا ویربھدرا سنگھ رکھ دیا گیا۔ پرتیبھا ویربھدر سنگھ نے بھی اسی نام سے منڈی کا لوک سبھا الیکشن لڑا تھا۔ اس وقت بھی ضمنی انتخابات میں کانگریس نے نہ صرف یہاں بلکہ تین اسمبلی حلقوں میں کامیابی حاصل کی تھی۔
      Published by:Shaik Khaleel Farhaad
      First published: