ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

نوئیڈا سے دہلی کوچ پر نکلے کسان ، روکنے کیلئے کالندی کنج میں بھاری پولیس فورس تعینات

دہلی کی مختلف سرحدوں پر دھرنا دے رہے کسانوں کو حمایت دینے کیلئے بھارتیہ کسان سنگھ لوک شکتی کے اراکین نے نوئیڈا میں راشٹریہ پریرنا استھال سے دہلی کی جانب کوچ کرنا شروع کردیا ہے ۔

  • Share this:
نوئیڈا سے دہلی کوچ پر نکلے کسان ، روکنے کیلئے کالندی کنج میں بھاری پولیس فورس تعینات
نوئیڈا سے دہلی کوچ پر نکلے کسان ، روکنے کیلئے کالندی کنج میں بھاری پولیس فورس تعینات

مرکز کے تین زرعی قوانین کے خلاف کسانوں کا آندولن اتوار کو گیارہویں دن بھی جاری ہے ۔ دہلی کی مختلف سرحدوں پر دھرنا دے رہے کسانوں کی حمایت کرنے کیلئے بھارتیہ کسان سنگھ لوک شکتی کے اراکین نے نوئیڈا میں راشٹریہ پریرنا استھل سے دہلی کی جانب کوچ کرنا شروع کردیا ہے ۔ یہ کسان کالندی کنج کے راستے دہلی کی جانب سے بڑھنے والے ہیں ، جس کو دیکھتے ہوئے وہاں کثیر تعداد میں پولیس فورس کو تعینات کرکے بیریکیڈنگ کردی گئی ہے ۔


وہیں جنوبی دہلی کے ڈی سی پی راجیش ایس نے کہا کہ ڈی این ڈی اور کالندی کنج پر ہماری گاڑیاں کھڑی ہیں اور کثیر تعداد میں فورس تعینات ہے ، لیکن ہم اپیل کریں گے کہ وہ آگے نہ بڑھیں ۔




وہیں بھارتیہ کسان یونین کے بینر تلے دہلی جارہے کسان فریدآباد کے اجروندا چوک بسنت واٹیکا میں رات میں قیام کرنے کے بعد دہلی ۔ فریدآباد بارڈر کیلئے نکلے تھے ، لیکن فرید آباد پولیس نے ان کو بدرپور فلائی اوور سے کئی کلومیٹر پہلے ہی روک دیا ۔ اس کے بعد کسان لیڈروں نے وارننگ دیتے ہوئے کہا کہ وہ انتظامیہ کی ہر بات مانتے ہوئے پیدل ہی چل رہے تھے ، لیکن انتظامیہ نے انہیں بلاوجہ ہی روک دیا ، لیکن وہ ہر حالت میں فریدآباد بارڈر پر جاکر رہیں گے ۔

اپوزیشن کے بہکاوے میں نہ آئیں کسان

ادھر زراعت کے وزیر مملکت کیلاش چودھری نے کہا کہ اپوزیشن کسانوں کو بھڑکانے کا کام کر رہی ہے ۔ کچھ سیاسی پارٹیوں کے لوگ آگ میں گھی ڈالنے کا کام کررہے ہیں ۔ اس قانون کے ذریعہ کسانوں کو آزادی ملی ہے ۔
Published by: Imtiyaz Saqibe
First published: Dec 06, 2020 04:09 PM IST