உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    نابالغ کی اجتماعی آبروریزی، گلاگھونٹا اور جھاڑی میں پھینک دی لاش، دو نیم کی پتیوں نے حل کردیا پورا معاملہ

    mirzapur crime news: پتنگ دینے کے بہانے بلاکر نابالغ کے ساتھ پڑوسی نوجوان اور عمر دراز شخص نے آبروریزی کے سانحہ کو انجام دیا۔ آبروریزی کے بعد پول کھلنے کے ڈر سے اس کا گلا گھونٹ کر قتل کردیا گیا۔ پولیس نے 36 گھنٹے بعد اس حادثہ کا پولیس نے انکشاف کردیا ہے۔

    mirzapur crime news: پتنگ دینے کے بہانے بلاکر نابالغ کے ساتھ پڑوسی نوجوان اور عمر دراز شخص نے آبروریزی کے سانحہ کو انجام دیا۔ آبروریزی کے بعد پول کھلنے کے ڈر سے اس کا گلا گھونٹ کر قتل کردیا گیا۔ پولیس نے 36 گھنٹے بعد اس حادثہ کا پولیس نے انکشاف کردیا ہے۔

    mirzapur crime news: پتنگ دینے کے بہانے بلاکر نابالغ کے ساتھ پڑوسی نوجوان اور عمر دراز شخص نے آبروریزی کے سانحہ کو انجام دیا۔ آبروریزی کے بعد پول کھلنے کے ڈر سے اس کا گلا گھونٹ کر قتل کردیا گیا۔ پولیس نے 36 گھنٹے بعد اس حادثہ کا پولیس نے انکشاف کردیا ہے۔

    • Share this:
      مرزا پور: پتنگ دینے کے بہانے بلاکر نابالغ کے ساتھ پڑوسی نوجوان اور عمر دراز شخص نے آبروریزی کے سانحہ کو انجام دیا۔ آبروریزی کے بعد پول کھلنے کے ڈر سے اس کا گلا گھونٹ کر قتل کردیا گیا۔ پولیس نے 36 گھنٹے بعد اس حادثہ کا پولیس نے انکشاف کردیا ہے۔ لاش سے چپکی نیم کی پتیوں کو دیکھ کرپولیس نے جانچ کی اور ملزمین تک پہنچ گئی۔ حادثہ میں شامل نوجوان اور عمر دراز شخص کو گرفتار کیا گیا۔

      اطلاع کے مطابق، 26 دسمبر اتوار کی شام کٹرا کوتوالی کے ان پڑھ روڈ واقع کوتوارو پورہ محلے میں ہوئی سنسنی خیز واردات نے لوگوں کو صدمے میں ڈال دیا تھا۔ کلاس 5 میں پڑھنے والی نابالغ اپنے ساتھیوں کے ساتھ کھیل رہی تھی، تبھی اس پر پڑوس میں رہنے والے نوجوان کی نظر پڑی۔ اس نے پتنگ کے بہانے گھر میں نابالغ کو بلایا، اس کے ساتھ عمردراز شخص بھی تھا۔ دونوں نے مل کر نابالغی کے ساتھ اجتماعی آبروریزی کی۔ پول کھلنے کے خوف سے رسی کے سہارے گلا گھونٹ کر اس کا قتل کردیا گیا۔ نابالغ کے گھر کے باہر نہ پاکر اس کے اہل خانہ بے چین ہوکر اس کی تلاش میں لگ گئے۔ تقریباً سوا گیارہ بجے ملزمین نے نابالغ کی لاش کو اس کے گھر سے چند قدم دور رکھ دیا۔ بیٹی کی لاش دیکھتے ہی اہل خانہ میں کہرام مچ گیا۔

      حادثہ کی اطلاع پاکر موقع پر پولیس کے اعلیٰ افسران کی ٹیم پہنچ گئی۔ دیر رات تک تلاش ہوتی رہی۔ آس پاس کے گھروں میں جب تلاشی لی گئی تب ملزم کے گھر سے نابالغ کی چپل اور پیر کی پائل مل گئی۔ سختی سے پوچھ گچھ میں امن اور ٹھاکر نے اپنا گناہ قبول کرلیا۔ ایس پی نے پریس کانفرنس کرکے حادثے کا انکشاف کردیا۔

      مقتول کے جسم پر چپکی دو نیم کی پتیوں نے پولیس کو ملا تھا سراغ

      آبروریزی کرنے کے بعد درندوں نے لڑکی کا گلا دباکر قتل کردیا۔ قتل کے بعد مقتول کے گھر کے پاس چھوڑ کر وہ فرار ہوگئے۔ اطلاع کی بنیاد پر پہنچے ایس پی سٹی سنجے ورما نے مہلوک کے جسم پر دو نیم کی پتیاں دکھائی دیں۔ پولیس اسی نیم کی پتی کے سہارے آس پاس نیم کے پیڑ کی تلاش کرنے لگی۔ گھر کے پاس ہی ایک نیم کا پیڑ نظر آیا اور پولیس اس گھر کے اندر چلی گئی۔ وہاں کے لوگوں سے پوچھ گچھ کی۔ پوچھ گچھ میں ایک نوجوان سے کچھ سراغ ہاتھ لگتا ہے۔ اس کے بعد ملزمین کے گھر سے چھپائی ہوئی سینڈل کو پولیس نے برآمد کرلیا۔
      Published by:Nisar Ahmad
      First published: