جے ڈی یو لیڈر کے بیٹے کی دبنگئی، سائڈ نہ دینے پر نوجوان کو ماری گولی، اب تک فرار

گیا۔ بہار کے گیا میں ایک جے ڈی یو ایم ایل سی کے بیٹے پر روڈ ریج میں ایک نوجوان کے قتل کا الزام لگا ہے۔

May 08, 2016 11:38 AM IST | Updated on: May 08, 2016 11:38 AM IST
جے ڈی یو لیڈر کے بیٹے کی دبنگئی، سائڈ نہ دینے پر نوجوان کو ماری گولی، اب تک فرار

گیا۔ بہار کے گیا میں ایک جے ڈی یو ایم ایل سی کے بیٹے پر روڈ ریج میں ایک نوجوان کے قتل کا الزام لگا ہے۔ الزامات کے مطابق جے ڈی یو ایم ایل سی منورما دیوی کے بیٹے راکی ​​نے اپنی نئی لینڈ روور کار کو پاس نہ دینے پر ایک سوئفٹ کار سوار کو گولی مار دی، جس سے اس کی موقع پر ہی موت ہو گئی۔

مقتول نوجوان کا نام آدتیہ سچدیوا تھا اور وہ گیا کے ایک بڑے کاروباری کا بیٹا تھا۔ بتایا جا رہا ہے کہ آدتیہ اپنے تین دوستوں کے ساتھ ایک پارٹی سے گھر واپس آ رہا تھا۔ تبھی اس کے پیچھے راکی کی ​​کار آ گئی۔ اس نے آدتیہ کی کار کو اوورٹیک کرنے کی کوشش کی، لیکن جب اس میں ناکام رہا تو اس نے پستول نکال کر آدتیہ کو گولی مار دی۔

Loading...

اس واقعہ کے بعد سے ملزم راکی ​​فرار ہے۔ پولیس نے لینڈ روورکارکو جے ڈی یو رکن اسمبلی منورما دیوی کے گھر سے برآمد کر لیا ہے۔ پولیس منورما دیوی کے شوہر بندی یادو کو حراست میں لے کر پوچھ گچھ کر رہی ہے۔ پولیس نے منورما کے باڈی گارڈ کو گرفتار کر لیا ہے۔

پوچھ گچھ کے دوران راکی ​​کے والد بندی یادو اپنے بیان سے پلٹ گئے۔ پہلے بندی نے کہا کہ ان کا بیٹا یہاں موجود نہیں ہے لیکن مزید پوچھ گچھ میں بندی نے اپنے بیان سے پلٹتے ہوئے کہا کہ راکی ​​کی گاڑی کو اوورٹیک کرنے کے بعد آدتیہ اور ان کے دوستوں نے راکی ​​کو کار سے اتار کر اس کو پیٹنے لگے۔ اپنے دفاع میں راکی ​​نے اپنی لائسنسی ریوالور نکال لی اور غلطی سے گولی چل گئی۔

Loading...