مرکزی حکومت کا دہلی والوں کو تحفہ، غیرمنظور شدہ کالونیوں کو کابینہ کی منظوری، 40 لاکھ افراد ہوں گے مستفیض

کابینہ کی میٹنگ میں حکومت نےفیصلہ کیا کہ دہلی کی غیرمنظورشدہ کالونیوں میں رہنے والے 40 لاکھ لوگوں کوگھرکا مالکانہ حق دے گی۔

Oct 23, 2019 05:48 PM IST | Updated on: Oct 23, 2019 05:55 PM IST
مرکزی حکومت کا دہلی والوں کو تحفہ، غیرمنظور شدہ کالونیوں کو کابینہ کی منظوری، 40 لاکھ افراد ہوں گے مستفیض

پرکاش جاؤڈیکر

نئی دہلی: دیوالی سے پہلے مرکزی حکومت نے دہلی کے باشندوں کو بڑا تحفہ دیا ہے۔ بدھ کو ہوئی کابینہ کی میٹنگ میں حکومت نے فیصلہ کیا کہ دہلی کی غیرمنظورشدہ کالونیوں میں رہنے والے 40 لاکھ لوگوں کوگھرکا مالکانہ حق دے گی۔ مرکزی وزیر پرکاش جاؤڈیکر نے اس بات کی اطلاع دی۔ انہوں نے بتایا کہ مرکزی کابینہ نےدہلی کی غیرمنظورشدہ کالونیوں کو مستقل کرنےکا فیصلہ لیا ہے۔ دہلی میں کل 1797 غیرمنظورشدہ کالونیاں ہیں۔ حکومت کے اس فیصلے سے ان کالونیوں میں رہنے والے تقریباً 40 لاکھ لوگوں کوفائدہ ملےگا۔

مرکزی حکومت نے اسے منظوری دینے کے بعد پارلیمنٹ میں ایک بل لانے کا فیصلہ کیا ہے۔ مرکزی وزیرہاؤسنگ ہردیپ سنگھ پوری نے کہا کہ مرکزی حکومت دہلی میں غیرمستقل کالونیوں کے باشندوں کومالکانہ حق دینے کے لئے سرمائی اجلاس کے دوران بل پارلیمنٹ میں پیش کرے گی۔ انہوں نے کہا کہ یہ تجویزکمیٹی کی سفارشات پر مشتمل ہے۔

Loading...

مرکزی وزیراوردہلی بی جے پی کےسینئر لیڈرہرش وردھن نے دہلی میں 1700 سے زیادہ غیرقانونی کالونیوں کومنظوری دینےکےلئے کابینہ کی منظوری دینے پروزیراعظم مودی کا شکریہ ادا کیا۔

واضح رہے کہ مرکزی حکومت نے یہ فیصلہ اس وقت کیا ہے جب آئندہ سال کے شروع میں ہی قومی دارالحکومت میں اسمبلی انتخابات ہونے ہیں۔ کابینہ کی منظوری ملنے کے بعد اب اس معاملے پرسیاست بھی شروع ہوجائے گی۔ کیونکہ مرکزمیں بی جے پی کی حکومت ہے جبکہ دہلی میں عام آدمی پارٹی کی حکومت ہے۔

Loading...
Listen to the latest songs, only on JioSaavn.com