ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

ربیع کی فصلوں پر ایم ایس پی بڑھی ، وزیر زراعت نے لوک سبھا میں بتائی نئی قیمت

کمیشن فار ایگریکلچر کوسٹ اینڈ پرائسز کی سفارشات کو تسلیم کرتے ہوئے مودی حکومت نے ربیع کی فصلوں کیلئے ایم ایس پی میں اضافہ کرنے کا فیصلہ کیا ہے ۔

  • Share this:
ربیع کی فصلوں پر ایم ایس پی بڑھی ، وزیر زراعت نے لوک سبھا میں بتائی نئی قیمت
ربیع کی فصلوں پر ایم ایس پی بڑھی ، وزیر زراعت نے لوک سبھا میں بتائی نئی قیمت

کمیشن فار ایگریکلچر کوسٹ اینڈ پرائسز کی سفارشات کو تسلیم کرتے ہوئے مودی حکومت نے ربیع کی فصلوں کیلئے ایم ایس پی میں اضافہ کرنے کا فیصلہ کیا ہے ۔ بتا دیں کہ آج صبح ہی وزیر اعظم مودی نے یہ واضح کردیا تھا کہ ایم ایس پی پہلے کی ہی طرح چلنے والی ہے ۔ کسانوں کی آمدنی 2022 تک دوگنا کرنے کے ہدف کو لے کر چل رہی مودی حکومت نے زرعی پیداوار کی فروخت کیلئے ریاستوں کے اے پی ایم سی قانون کے تحت چلنے والی منڈیوں کے علاوہ ایک متبادل چینل فراہم کرنے کیلئے نیا قانون بنایا ہے ۔


ادھر مرکزی وزیر زراعت نریندر سنگھ تومر نے پیر کو لوک سبھا میں نئے ایم ایس پی کے بارے میں جانکاری دی ۔ حکومت نے گیہوں کا ایم ایس پی 50 روپے فی کوئنٹل بڑھا کر 1975 روپے فی کوئنٹل کردیا ہے ۔




مرکزی حکومت سی اے سی پی کی سفارشات کی بنیاد پر کچھ فصلوں کے بوائی سیزن سے پہلے ہی ایم ایس پی کا اعلان کرتی ہے ۔ اس سے کسانوں کو یہ یقین دہانی کرائی جاتی ہے کہ بازار میں ان کی فصل کی قیمتیں گرنے کے باوجود حکومت انہیں طے قیمت دے گی ۔ اس کے ذریعہ حکومت ان کا نقصان کم کرنے کی کوشش کرتی ہے ۔



کیوں ضروری ہے ایم ایس پی ؟

حالانکہ سبھی حکومتیں کسانوں کو اس کا فائدہ نہیں دیتی ہیں ۔ اس وقت بہار اور مدھیہ پردیش میں سب سے برا حال ہے ، جہاں کسانوں کو ایم ایس پی نہیں مل پارہا ہے ۔ ویسے بھی شانتا کمار کمیٹی نے اپنی رپورٹ میں بتایا تھا کہ صرف چھ فیصدی کسانوں کو ہی ایم ایس پی کا فائدہ ملتا ہے ۔ یعنی 94 فیصدی کسان مارکیٹ پر ڈیپینڈ ہیں ۔

ایم ایس پی طے کرنے کی بنیاد

کمیشن فار ایگریکلچر کوسٹ اینڈ پرائسز ایم ایس پی کی سفارش کرتا ہے ۔ کچھ باتوں کو دھیان میں رکھ کر قیمت طے کی جاتی ہے ۔

پیداوار کی لاگت کیا ہے ۔

فصلوں میں لگنے والی چیزوں کی قیمتوں میں کتنی تبدیلی آئی ہے ۔

بازار میں موجودہ قیمتوں کا رخ

ڈیمانڈ اور سپلائی کی صورتحال

قومی اور بین الاقوامی سطح پر حالات کیسے ہیں ۔
Published by: Imtiyaz Saqibe
First published: Sep 21, 2020 05:32 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading