وادی کشمیرمیں آرٹیکل 370کی منسوخی کے بعد اب مرکزی حکومت کریگی یہ کام، کشن ریڈی کا انکشاف

جموں وکشمیر کا خصوصی درجہ ختم کرنے اور آرٹیکل 370کے کچھ التزامات کوہٹائے جانے کے بعد مرکزی حکومت ریاست میں برسوں سے بند پڑے مندروں کے دروازے پھرسے کھولنے کی تیاری کررہی ہے۔

Sep 23, 2019 05:50 PM IST | Updated on: Sep 23, 2019 05:50 PM IST
وادی کشمیرمیں آرٹیکل 370کی منسوخی کے بعد اب مرکزی حکومت کریگی یہ کام، کشن ریڈی کا انکشاف

وزیرمملکت برائے وزارتِ داخلہ جی کشن ریڈی کی فائل فوٹو۔(تصویر:نیو18)۔

جموں وکشمیر کا خصوصی درجہ ختم کرنے اور آرٹیکل 370کے کچھ التزامات کوہٹائے جانے کے بعد مرکزی حکومت ریاست میں برسوں سے بند پڑے مندروں کے دروازے پھرسے کھولنے کی تیاری کررہی ہے۔ مرکزی وزیرمملکت برائے داخلہ جی کشن ریڈی نے پیرکویہاں میڈیاسے بات چیت میں کہا کہ وادی کشمیر میں گزشتہ کئی برسوں سے تقریباً 50ہزارمندروں کے دروازے بند پڑے ہیں۔

 

Loading...

ان مندروں میں سے کچھ کا ڈھانچہ بھی توڑ دیا گیا تھا اور مورتیوں کو بھی نقصان پہنچایا گیاتھا۔ مرکزی حکومت وادی کشمیر میں ایسے مندروں کا جلد ہی سروے کرانے جارہی ہے اور جلد ہی ان کو پھر سے کھولنے پر کام شروع کیاجائےگا۔ ریڈی نے بتایا کہ کشمیرمیں بند پڑے اسکولوں کو پھر سے کھولے جانے پر بھی کام شروع کیا جائےگا۔

وادی میں بندپڑے اسکولوں کی صحیح معلومات کےلئے سروے کرایا جارہاہے۔ سروے کے لئے کمیٹی تشکیل دی گئی ہے۔کمیٹی کی رپورٹ کے بعد اسکولوں کو پھرسے کھولنے کےلئے قدم اٹھائے جائیں گے۔ واضح رہے کہ آرٹیکل 370 کی منسوخی کے بعد مودی حکومت نے وادی کشمیر میں ہم آہنگی کو برقراررکھنے کے لیے مختلف اقدامات کررہی ہے۔

Loading...