ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

بلیک فنگس کی دوا پر ٹیکس نہیں لگے گا ، ویکسین پر پانچ فیصدی جی ایس ٹی : نرملا سیتارمن

نرملا سیتارمن (Nirmala Sitharaman) نے جی ایس ٹی کونسل میں لئے گئے فیصلے کے بارے میں بتاتے ہوئے کہا کہ کورونا ویکسین پر جی ایس ٹی میں کوئی تبدیلی نہیں کی گئی ہے ۔

  • Share this:
بلیک فنگس کی دوا پر ٹیکس نہیں لگے گا ، ویکسین پر پانچ فیصدی جی ایس ٹی : نرملا سیتارمن
نرملا سیتا رمن ۔

نئی دہلی : وزیر خزانہ نرملا سیتارمن کی صدارت میں جی ایس ٹی کونسل کی 44 ویں میٹنگ کے بعد کورونا ویکسین پر پانچ فیصد جی ایس ٹی شرح کو ہی برقرار رکھنے کا فیصلہ کیا گیا ہے ۔ میٹنگ کے بعد پریس کانفرسن میں وزیر خزانہ نے کہا کہ جی ایس ٹی کونسل نے بلیک فنگس کی دوا کو ٹیکس فری کرنے کو منظوری دی ہے ۔


علاوہ ازیں جی ایس ٹی کونسل نے ریمیڈیسیور دوا پر جی ایس ٹی 12 فیصد سے کم کرکے پانچ فیصد کرنے کی تجویز کو منظور کرلیا ہے ۔ آکسیمیٹر ، میڈیکل گریڈ کی آکسیجن اور وینٹی لیٹر پر بھی جی ایس ٹی کی شرح 12 فیصد سے کم کرکے پانچ فیصد کردی گئی ہے ۔




75 فیصد ویکسین مفت میں دستیاب کرائی جارہی

سیتارمن نے کہا کہ مرکزی حکومت 75 فیصد ویکسین خرید رہی ہے اور اس پر جی ایس ٹی بھی ادا کررہی ہے ۔ لوگوں کو سرکاری اسپتالوں میں جو یہ 75 فیصدی ویکسین مفت میں دسیتاب کرائی جارہی ہے ، عوام پر اس کا کوئی اثر نہیں ہوگا ۔

سیتارمن نے کہا کہ الیکٹرک فرنیسیج اور ٹیمپریچر اکیوپمنٹ پر جی ایس ٹی کی شرح کم کرکے پانچ فیصدی اور ایمبولنس پر 12 فیصدی کردی گئی ہے ۔ یہ شرحیں ستمبر تک ویلڈ رہیں گی ۔ وزرا کے گروپ نے ان میں اگست تک تخفیف کی سفارش کی تھی ۔

بتادیں کہ 28 مئی کو ہوئی پچھلی میٹنگ میں پی پی ای کٹ ، ماسک اور ٹیکہ سمیت کورونا سے متعلق ضروری اشیا پر ٹیکس راحت دینے کیلئے وزرا کے ایک گروپ کو تشکیل دینے کا فیصلہ کیا گیا تھا ۔ غور طلب ہے کہ جی او ایم نے سات جون کو اپنی رپورٹ سونپ دی تھی ۔
Published by: Imtiyaz Saqibe
First published: Jun 12, 2021 05:10 PM IST