உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    موہالی حملہ: پاکستان ISI کی مدد سے ببر خالصہ اور گینگسٹر لکھوندر نے داغا راکٹ، پولیس نے کیا انکشاف

    موہالی حملہ: پاکستان ISI کی مدد سے ببر خالصہ اور گینگسٹر لکھوندر نے داغا راکٹ

    موہالی حملہ: پاکستان ISI کی مدد سے ببر خالصہ اور گینگسٹر لکھوندر نے داغا راکٹ

    Mohali Rocket Attack: موہالی کے سیکٹر -77 میں پنجاب پولیس کی خفیہ یونٹ کے دفتر کے احاطے میں رات کو ایک دھماکہ ہوا تھا۔ دھماکہ رات سات بج کر 45 منٹ پر ہوا تھا۔

    • Share this:
      چنڈی گڑھ: پنجاب پولیس نے جمعہ کے روز کہا کہ موہالی میں اس کی خفیہ یونٹ کے دفتر میں دھماکے کا اہم سازش کرنے والے ترن تارن ضلع کا رہنے والا لکھوندر سنگھ لانڈا ہے، جو کہ ایک گینگسٹر ہے اور 2017 میں کناڈا چلا گیا تھا۔ وہ ببر خالصہ کے دہشت گرد ہروندر سنگھ رنڈا کا قریبی معاون ہے، جس کے پاکستان کی خفیہ ایجنسی آئی ایس آئی سے قریبی رہتے ہیں۔ پنجاب پولیس نے کہا کہ پاکستان آئی ایس آئی کی حمایت سے بی کے آئی (ببر خالصہ انٹرنیشنل) اور گینگسٹر کے ذریعہ اس راکٹ حملے کو انجام دیا گیا۔

      واضح رہے کہ موہالی کے سیکٹر-77 میں پنجاب پولیس کی خفیہ یونٹ کے ہیڈ کوارٹر احاطے میں پیر کے روز رات کو ایک دھماکہ ہوا تھا۔ دھماکہ رات  تقریباً سات بج کر 45 منٹ پر ہوا تھا۔ حادثہ کے بعد موہالی کے سوہنا پولیس تھانے میں تعزیرات ہند (آئی پی سی)، غیر قانونی سرگرمیاں (روک تھام) ایکٹ (یواے پی اے) اور دھماکہ خیز ایکٹ کی متعلقہ دفعات کے تحت ایک معاملہ درج کیا گیا تھا۔

      پنجاب کے پولیس ڈائریکٹر نے کہا، ‘راکٹ حملے کا اہم ملزم لکھبیر سنگھ لانڈا ہے۔ وہ ترن تارن کا رہنے والا ہے۔ وہ ایک گینگسٹر ہے اور 2017 میں کناڈا میں منتقل ہوگیا۔ وہ ہرندر سنگھ رنڈا کا قریبی معاون ہے، جو ودھاوا سنگھ اور آئی ایس آئی کا حصہ ہے، جو کہ پاکستان سے آپریٹ کیا جاتا ہے‘۔ پولیس افسران نے بتایا کہ حراست میں لئے گئے ترن تارن ضلع کے کلا گاوں کے باشندہ نشان سنگھ نے دو ملزمین کو اپنے گھر اور اپنے دو جاننے والوں کے گھروں میں پناہ دی تھی۔

      نشان سنگھ نے ہی ملزمین کو RPG مہیا کرایا

      ڈی جی پی نے کہا کہ نشان سنگھ نے ہی ملزمین کو RPG  مہیا کرایا تھا۔ نشان سنگھ پہلے سے ہی کئی مجرمانہ معاملوں کا سامنا کر رہا ہے، جس میں ایک معاملہ قتل کی کوشش کا ہے، جبکہ اس کے خلاف دوسرا معاملہ نارکوٹکس ڈرگس اینڈ سائیکو ٹراپک مادہ ایکٹ (این ڈی پی ایس) کے تحت درج ہے۔ پولیس نے بتایا، ’نشان اور اس کے دو معاونین کے علاوہ حادثہ میں ایک دیگر شخص بلجندر ریمبو بھی شامل تھا۔ وہ تیسرے ترن تارن ضلع کا رہنے والا ہے۔ اس کے پاس سے ایک اے کے-47 برآمد ہوا ہے۔

      نشان سنگھ حادثہ کا اہم ملزم

      پنجاب کے ڈی جی پی نے کہا، ’راکٹ حملے کا اہم سازش کرنے والا لکھبیر سنگھ لانڈا ہے۔ وہ ترن تارن کا رہنے والا ہے۔ وہ ایک گینگسٹر ہے اور 2017 میں کناڈا میں شفٹ ہوگیا۔ وہ ہریندر سنگھ رنڈا کا قریبی معاون ہے، جو ودھا وا سنگھ اور آئی ایس آئی کا حصہ ہے، جو کہ پاکستان سے چلایا جاتا ہے‘۔ پولیس افسر نے بتایا کہ حراست میں لئے گئے ترن تارن ضلع کے کلّا گاوں کے باشندہ نشان سنگھ نے دو ملزمین کو اپنے گھر اور اپنے دو جاننے والوں کے گھروں میں پناہ دی تھی۔
      Published by:Nisar Ahmad
      First published: