உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    وقف جائیداد کو لے کرحکومت نے اٹھایا بڑا قدم، 100 دنوں میں ہوگا یہ کام

    وقف جائیدادوں کی 100 فیصد جیوٹیگنگ اور ڈیجٹلائزییشن کے لئے مہم شروع۔ پی ٹی آئی

    وقف جائیدادوں کی 100 فیصد جیوٹیگنگ اور ڈیجٹلائزییشن کے لئے مہم شروع۔ پی ٹی آئی

    مرکزی وزیربرائے اقلیتی امورمختارعباس نقوی نے کہا کہ وقف جائیداد کی 100 فیصد جیو ٹیگنگ اورڈیجٹلائزیشن کے لئے مہم شروع کردیا گیا ہے، تاکہ ان کا غلط استعمال سماج کی بھلائی کےلئے کیا جاسکے۔

    • Share this:
      مرکزی وزیربرائےاقلیتی امورمختارعباس نقوی نے پیرکوکہا کہ پورے ملک میں وقف جائیداد کا 100 دنوں کےاندرپوری طرح ڈیجٹلائزیشن کردیا جائے گا۔ پورے ملک میں 6 لاکھ سے زیادہ رجسٹرڈ وقف جائیداد ہیں۔ مختارعباس نقوی نے دہلی میں سینٹرل وقف کونسل کے قومی اجلاس میں 'قومی وقف بورڈ ترقیاتی اسکیم' کےتحت 8 وقف متولیوں (سرپرست) کوانعام دیا گیا۔

      یہ پہلا موقع ہے جب وقف متولیوں کووقف جائیدادوں کا صحیح استعمال خاص طورپران کا ضرورتمندوں کے سماجی، اقتصادی اورتعلیمی طورپربااختیاربنانے کےلئے مناسب استعمال کرنے والے متولیوں کوانعامات سے سرفرازکیا گیا ہے۔ انہوں نے کہا 'پورے ملک میں کام کرنے والے متولی وقف جائیداد کے کسٹوڈین (سرپرست) ہیں۔ ان کی ذمہ داری ہے کہ وقف جائیداد کا صحیح استعمال اورتحفظ ہو'۔

      یہ کام 100 دنوں میں ہوں گے

      مختارعباس نقوی نے کہا کہ وقف جائیداد کی 100 فیصد جیوٹیگنگ اورڈیجٹلائزیشن کے لئے مہم شروع کردی گئی ہےتاکہ پورے ملک میں واقع وقف جائیدادوں کا استعمال معاشرے کی فلاح وبہبود اوربھلائی کے لئے کیا جاسکے۔ جبکہ پورے ملک میں وقف جائیدادوں کا 100 دنوں کےاندرپوری طرح ڈیجٹلائزیشن کرنے کا ہدف رکھا گیا ہے۔

      ڈیجٹلائزیشن کے لئے ملے گا تعاون

      مرکزی وزیرنےکہا کہ وقف ریکارڈ کےڈیجٹلائزیشن اورجیو ٹیگنگ سمیت کےلئے سینٹرل وقف کونسل ریاستی وقف بورڈوں کومالی مدد اورتکنیکی تعاون دے رہی ہے تاکہ سبھی ریاستی وقف بورڈ، وقف جائیدادوں کےڈیجٹلائزیشن کا کام طے شدہ میعاد میں پورا کرسکیں۔ مختارعباس نقوی نےکہا کہ وقف جائیدادوں سے متعلق نئےاحکامات کےلئے جسٹس (ریٹائرڈ) ذکی اللہ خان کی قیادت میں تشکیل پانچ رکنی کمیٹی کےذریعہ رپورٹ سونپ دی گئی ہے۔  اس رپورٹ کی سفارشات وقف جائیدادوں کے بہتراستعمال اوردہائیوں سے تنازعہ میں پھنسی جائیدادوں کوتنازعہ سے باہرنکالنے کےلئے وقف ضوابط کوآسان اورموثربنائےگی۔ مرکزی حکومت اس کمیٹی کی سفارشات پرریاستی حکومتوں سےتبادلہ خیال کےبعد ضروری قدم اٹھا رہی ہے۔
      First published: