உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    گیارہ سال کے بچے نے مودی حکومت کو لکھا 4 صفحات کا خط، کہا پب جی گیم پر لگا دو پابندی

    PUBG game

    PUBG game

    مہاراشٹر اور مرکزی حکومت کو خط لکھنے کے بعد اب یہ بچہ بامبے ہائی کورٹ میں عوامی عرضی داخل کرنے کی بھی تیاری کر رہا ہے۔ جس میں بچہ اس گیم پر مکمل طور پر پابندی لگانے کی مانگ کرے گا۔

    • Share this:
      ممبئی کے باندرا علاقے میں رہنے والے ایک 11 سال کے بچے نے مرکزی حکومت اور ریاستی حکومت کو خط لکھا ہے۔ چار صفحات کے اس خط کے ذریعے سے بچے نے آن لائن گیم (پب جی ) پر پابندی لگانے کا مطالبہ کیا ہے۔ بچے نے لکھا ہے کہ پب جی کھیل بچوں کو قتل کرنے اور ہتھیاروں کا استعمال کرنے کی طرف کھینچتا ہے۔ ایسے میں حکومت اس گیم پر پابندی لگادے۔

      جانکاری ملی ہے کہ مہاراشٹر اور مرکزی حکومت کو خط لکھنے کے بعد اب یہ بچہ بامبے ہائی کورٹ میں عوامی عرضی داخل کرنے کی بھی تیاری کر رہا ہے۔ جس میں بچہ اس گیم پر مکمل طور پر پابندی لگانے کی مانگ کرے گا۔

      غور طلب ہے کہ حال ہی میں گجرات میں پب جی گیم پر پابندی لگائی جا چکی ہے۔ ایجوکیشن ڈپارٹمینٹ کی جانب سے اسکولوں کو بھی ہدایات دی گئیں کہ اس گیم کے نقصانوں کے بارے میں بچوں کو جانکاری دیں۔ دھیان رہے کہ اس سے پہلے بلو وہیل گیم کے چلتے بھی کافی دقتیں ہوئی تھیں اور کئی بچوں نے خودکشی کر لی تھی۔
      First published: