ہوم » نیوز » مغربی ہندوستان

ممبئی کے ایک کیفے کا انوکھا اقدام: کووڈ کرفیو کے دوران لوگوں کو کسیے ملا سہارا؟ جانئے یہاں

ممبئی کے وانڈرا ویسٹ میں واقع ریسٹورنٹ ارتھ کیفے (Earth Café) علاقے میں بے روزگار افراد، مہاجر مزدوروں اور ان کے بچوں کو مفت میں کھانا مہیا کررہا ہے۔ ریسٹورنٹ کے مالک وی کھٹوانی (V Khatwani) نے بتایا کہ وہ روزانہ 150 کھانے کے پارسل مہیا کرا رہے ہیں۔

  • Share this:
ممبئی کے ایک کیفے کا انوکھا اقدام: کووڈ کرفیو کے دوران لوگوں کو کسیے ملا سہارا؟ جانئے یہاں
علامتی تصویر

عالمی وبا کورونا وائرس (COVID-19) کے کیسوں میں اضافے پر قابو پانے کے لئے جاری کرفیو جیسی پابندیوں کے درمیان ممبئی کے ویج ریسٹورنٹ نے ایک منفرد مثال قائم کی ہے۔اس ریسٹورنٹ نے ضرورت مند اور غریبوں کو مفت میں کھانا تقسیم کرنا شروع کردیا ہے۔ ریاست میں بدھ کی رات سے دفعہ 144 نافذ ہے۔ جس کے تحت چار یا اس سے زیادہ لوگوں کے جمع ہونے پر پابندی ہے۔ یہ یکم مئی تک برقرار رہے گا۔


ممبئی کے وانڈرا ویسٹ میں واقع ریسٹورنٹ ارتھ کیفے (Earth Café) علاقے میں بے روزگار افراد، مہاجر مزدوروں اور ان کے بچوں کو مفت میں کھانا مہیا کررہا ہے۔ ریسٹورنٹ کے مالک وی کھٹوانی (V Khatwani) نے بتایا کہ وہ روزانہ 150 کھانے کے پارسل مہیا کرا رہے ہیں۔انہوں نے بتایا کہ ’’ہم نے اتوار کو فری فوڈ ڈرائیو (free food drive ) کا آغاز کیا ہے اور سبزیوں میں چاول پلائو پر مشتمل 150 فوڈ پارسل ضرورت مندوں کو دے رہے ہیں‘‘۔


علامتی تصویر
علامتی تصویر


’’ہمارے شیف صحتمند اور تغذیہ بخش کھانے تیار کرتا ہے۔ جو سینیٹائز کیا جاتا ہے اور پھر بے روزگار افراد، مہاجر مزدور اور ان کے بچوں کو دیا جاتا ہے‘‘۔

’’ماہ رمضان المبارک کے آغاز کے ساتھ ہی ریستوراں کے رضاکار بھی کھانا تقسیم کرنے ماہم درگاہ (Mahim Dargah ) کے قریب بھی چلے گئے ہیں۔ انہوں نے ماہم چرچ (Mahim church) کے قریب کھانا مہیا کرنے میں بھی مدد کی‘‘۔

نیک کاموں کی ایسی کوششیں ایک ایسے وقت میں ہو رہی ہیں جب مہاراشٹرا حکومت نے کووڈ۔19 میں اضافے کے بعد سخت پابندیوں کے ساتھ ہفتے کے آخر میں لاک ڈاؤن اور نائٹ کرفیو نافذ کیا ہے۔تازہ ترین رہنما خطوط کے مطابق کسی بھی شخص کو کسی مناسب وجہ کے بغیر عوامی جگہ پر رہنے کی اجازت نہیں ہے۔ ضروری خدمات کے علاوہ تمام ادارے، عوامی مقامات، سرگرمیاں اور خدمات بند رہیں گی۔ فلموں، سیریلز اور اشتہاروں کی شوٹنگ بند رہے گی اور شادیوں میں صرف 25 افراد کو شرکت کی اجازت دی گئی ہے۔
Published by: Mohammad Rahman Pasha
First published: Apr 18, 2021 09:48 AM IST