ہوم » نیوز » وطن نامہ

مسلمانوں کی حمایت سے ممکن ہوسکی این ڈی اے کی کامیابی: دیکھیں ویڈیو

معروف سماجی کارکن طاہرہ حسن کہتی ہیں کہ شیعہ طبقے کے عالموں کے اشارے پر اس مخصوص طبقے کا ووٹ بی جے پی کو پڑا ہے۔

  • Share this:
مسلمانوں کی حمایت سے ممکن ہوسکی این ڈی اے کی کامیابی: دیکھیں ویڈیو
علامتی تصویر

الیکشن کے حیران کن نتائج کے بعد یہ بحث بھی گرم ہے کہ اس بار مسلم طبقے نے بی جے پی کو ووٹ کیا یا نہیں۔ آل انڈیا مائنارٹیز فورم فار ڈیموکریسی کے مطابق یہ بحث بے معنی ہے کیونکہ مسلم طبقے نے بی جے پی کو بڑی تعداد میں ووٹ کیا ہے۔ فورم کی جانب سے بی جے پی کی حمایت کی جو اپیل کی گئی تھی اس کا مسلم طبقے پر خاطر خواہ اثر ہوا ہے۔ اس بار بی جے پی نے جو غیر معمولی کامیابی حاصل کی ہے اس پر پورے ملک میں جوش وخروش ہے۔ شکست خوردہ سیاسی جماعتوں کو چھوڑ کر اس کامیابی کا استقبال سماج کا ہر طبقہ کررہا ہے۔ کچھ لوگ کہتے ہیں کہ اس بار مسلمانوں نے سوچے سمجھے ارادے اور شعور کے ساتھ بی جے پی کی حمایت کی ہے۔


معروف سماجی کارکن طاہرہ حسن کہتی ہیں کہ شیعہ طبقے کے عالموں کے اشارے پر اس مخصوص طبقے کا ووٹ بی جے پی کو پڑا ہے۔ وہ ذاتی مفاد کے لئے بی جے پی کی حمایت کرنے والے مولویوں پر سخت تنقید کرتی ہیں۔ ساتھ ہی یہ بھی کہتی ہیں کہ جمہوری دستور کے مطابق ہر باشندہ اپنی پسند کی جماعت کو ووٹ دینے کے لئے آزاد ہے۔


وہیں، بی جے پی کے ریاستی ترجمان کہتے ہیں کہ بی جے پی نے مسلم خواتین کو تین طلاق سےچھٹکارا دلانے کے لئے جو کام کیا اس سے بھی اثر پڑا ہے اور اس کامیابی میں سبھی کا ہاتھ ہے۔ بات اگر لکھنئو کی کریں تو مائنارٹیز فورم کے علاوہ، مولانا کلب جواد، مولانا آغا روحی اور مولانا علی حسین قمی سمیت کئی اور شیعہ علما نے بھی راجناتھ سنگھ اور بی جے پی کی حمایت کی تھی اور ساتھ ہی ان کی کامیابی کے لئے دعائیں بھی کی گئی تھیں۔ لہٰذا اس کامیابی میں ان لوگوں کا بھی اہم کردار ہے۔

First published: May 29, 2019 01:42 PM IST