உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    18 دن میں 8 واقعات سے مچا ہنگامہ، حکومت نے Spicejet کو بھیجا نوٹس

    Youtube Video

    اس واقعہ کو سنجیدگی سے لیتے ہوئے شہری ہوابازی کے وزیر جیوترادتیہ سندھیا نے ٹویٹ کیا ہے کہ مسافروں کی حفاظت سب سے اہم ہے۔ اگر حفاظتی معیارات سے متعلق معمولی بھی گڑبڑی ہوتی ہے تو اس کی مکمل چھان بین کی جائے گی اور وقت پرسدھار کیا جائے گا۔

    • Share this:
      گزشتہ روز ایک ہی دن میں اسپائس جیٹ ایئر لائن کے تین طیاروں میں تکنیکی خرابی پائی گئی۔ خرابی کے بعد طیاروں کی ہنگامی لینڈنگ کی گئی۔ خوش قسمتی سے ان تینوں واقعات میں مسافروں کو کسی قسم کی پریشانی کا سامنا نہیں کرنا پڑا۔ گزشتہ 18 دنوں میں اسپائس جیٹ کے طیاروں میں 8 تکنیکی خرابیوں کی وجہ سے حکومت بھی پریشان ہوگئی ہے۔ حکومت نے اسپائس جیٹ کو اس کی خراب اندرونی سیکورٹی میں سنگین خامی کے پیش نظر نوٹس جاری کیا ہے اور تین دن کے اندر جواب دینے کو کہا ہے۔

      اس واقعہ کو سنجیدگی سے لیتے ہوئے شہری ہوابازی کے وزیر جیوترادتیہ سندھیا نے ٹویٹ کیا ہے کہ مسافروں کی حفاظت سب سے اہم ہے۔ اگر حفاظتی معیارات سے متعلق معمولی بھی گڑبڑی ہوتی ہے تو اس کی مکمل چھان بین کی جائے گی اور وقت پرسدھار کیا جائے گا۔


      تین دن کے اندر دیں جواب
      ڈائریکٹوریٹ جنرل آف سول ایوی ایشن (ڈی جی سی اے) نے اسپائس جیٹ کو ایک نوٹس جاری کرتے ہوئے کہا ہے کہ واقعات کا جائزہ لینے سے پتہ چلتا ہے کہ ان میں سے زیادہ تر واقعات اندرونی سکیورٹی کی ناقص نگرانی اور ناکافی دیکھ بھال  internalsecurity oversight and inadequate maintenance کی وجہ سے ہوئے ہیں۔ یہ واقعات نظام سے متعلقہ ناکامیوں کی مثالیں ہیں اور سیکورٹی معیارات میں بگاڑ کے نتیجے میں پیش آئے ہیں۔ ایسی صورتحال میں آپ کو تین دن کے اندر اندر اس خراب اندرونی سیکورٹی کے بارے میں جواب دینا ہوگا۔ ڈی جی سی اے کے مطابق ان تمام واقعات کی سنجیدگی سے تحقیقات جاری ہیں۔

      گھریلو LPG Gas Cylinder کے بڑھے دام 50  روپے بڑھے، دہلی میں اتنی ہوئی قیمت

      Instagram Facebook Down:فیس بک،انسٹاگرام کےصارفین کوپیش آرہی ہےدشواری،ٹویٹرپرشکایت


      ڈی جی سی اے نے اسپائس جیٹ کی کئی دیگر خامیوں کی بھی نشاندہی کی ہے۔ خراب اندرونی سکیورٹی کے علاوہ ڈی جی سی اے نے عملے کو وقت پر رقم کی عدم ادائیگی کا مسئلہ بھی اٹھایا ہے۔ اس کے علاوہ اسپائس جیٹ کے فلیٹ میں اسپیئر پارٹس کی خامیوں کی طرف بھی توجہ مبذول کروائی گئی ہے۔ کل کولکاتہ سے چین جانے والے اسپائس جیٹ کے ایک کارگو طیارے میں weather radar stopped working نے کام کرنا چھوڑ دیا۔ اسی طرح کانڈلا سے ممبئی جانے والی پرواز کی ونڈ شیلڈ میں شگاف پڑ گیا اور دبئی جانے والے طیارے کے فیول انڈیکیٹر میں فنی خرابی پیدا ہوگئی جس کے باعث کراچی میں ہنگامی لینڈنگ کی گئی۔
      Published by:Sana Naeem
      First published: