مہاراشٹر: این سی پی نے کانگریس کے سر پھوڑا ٹھیکرا، کہا- ہماری وجہ سے نہیں ہوئی تاخیر

این سی پی لیڈراجیت پوارنےکہا ہےکہ جب تک کانگریس کا خط نہیں ملتا ہے، تب تک شیوسینا کی حمایت کے بارے میں کچھ نہیں کہا جاسکتا ہے۔

Nov 12, 2019 04:59 PM IST | Updated on: Nov 12, 2019 05:10 PM IST
مہاراشٹر: این سی پی نے کانگریس کے سر پھوڑا ٹھیکرا، کہا- ہماری وجہ سے نہیں ہوئی تاخیر

این سی پی لیڈراجیت پوارنے کانگریس پرحملہ کیا ہے۔ فائل فوٹو

ممبئی: مہاراشٹرمیں حکومت بنانے کولے کرالزام اورجوابی الزام کا دورشروع ہوگیا ہے۔ نیشنلسٹ کانگریس پارٹی (این سی پی) کے سینئرلیڈراجیت پوارنے منگل کوکہا کہ جب تک کانگریس سے حمایت ملنے کا خط نہیں ملتا، تب تک ہم این سی پی کچھ نہیں کرسکتے ہیں۔ کل ہم نے پورے دن ان کا انتظارکیا، لیکن کانگریس کی طرف سے کوئی خط نہیں آیا۔

اجیت پوارنے کہا کہ آج ہمارے درمیان تبادلہ خیال ہوگا، اگرکچھ حل نکلا توہم انہیں (شیوسینا) کوفون کریں گے۔ اجیت پوارنےکہا کہ پیرکواحمد پٹیل کا فون آیا تھا۔ انہوں نےکہا تھا کہ میٹنگ کےلئےبیٹھنا چاہتے ہیں۔ اس کے بعد شرد پوارنےکہا کہ آج وہ نہیں آسکتے ہیں۔ آج ان کی میٹنگ ہے، ساتھ ہی این سی پی لیڈرنےکہا کہ کانگریس کےلیڈراب تک ممبئی نہیں آئے ہیں۔ گورنرنے سبھی اراکین اسمبلی کا صحیح دستخط مانگا ہے، جوآج ہوتا ہوا نظرنہیں آرہا ہے۔ انہوں نےکہا کہ کانگریس کوہی فیصلہ لینا ہے۔

Loading...

ہماری وجہ سے نہیں ہوئی تاخیر

صحافیوں سے بات کرتے ہوئےاجیت پوارنےکہا کہ یہ بالکل غلط ہےکہ ہماری وجہ سے شیوسینا کو حمایت دینے میں تاخیرہوئی ہے۔ انہوں نےکہا کہ ہم نے(این سی پی- کانگریس) ساتھ  ساتھ الیکشن لڑا ہے، اس لئے ساتھ ہی فیصلہ لینا تھا۔ پیرکوہم نے صبح 10 بجے سے شام 7:30 بجےتک کانگریس کا انتظارکیا، لیکن ان کا خط نہیں آیا۔ اجیت پوارنےکہا کہ اگر حمایت میں کانگریس نہیں ہوگی توحکومت میں استحکام نہیں ہوگی۔ پہلے انہوں نےکہا کہ صبح خط ملےگا، پھرکہا شام 4:30 بجےآئے گا، پھرکہا کہ ابھی تاخیرہے، ایسے میں ہم نے انتظارکیا، لیکن ان کا خط نہیں آیا ہے۔

سنجے راؤت سے ملے شرد پوار

وہیں نیشنلسٹ کانگریس پارٹی (این سی پی) کے سربرا شرد پوارنے لیلاوتی اسپتال میں جاکرشیوسینا کے رکن پارلیمنٹ سنجے راؤت کی خیریت دریافت کی۔ دراصل پیرکی شام کو سنجےراؤت کی اچانک طبیعت خراب ہوگئی تھی۔ سینے میں درد کی شکایت کے بعد انہیں اسپتال میں داخل کرایا گیا تھا۔ فی الحال لیلاوتی اسپتال میں ان کا علاج چل رہا ہے۔ حالانکہ شام میں یہ خبرآئی تھی کہ پریشانی کی کوئی بات نہیں ہے۔ دودنوں کے آرام کے بعد انہیں اسپتال سے چھٹی مل جائے گی۔ انہیں دودنوں تک اسپتال میں آرام کی ضرورت ہے۔

Loading...