உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    Omicron کے خطرے کو دیکھتے ہوئے بیرون ممالک سے آنے والوں کیلئے گائیڈ لائنس میں تبدیلی، جانئے پوری تفصیل

    Omicron کے خطرے کو دیکھتے ہوئے بیرون ممالک سے آنے والوں کیلئے گائیڈ لائنس میں تبدیلی، جانئے پوری تفصیل

    Omicron کے خطرے کو دیکھتے ہوئے بیرون ممالک سے آنے والوں کیلئے گائیڈ لائنس میں تبدیلی، جانئے پوری تفصیل

    International Travel,Omicron Crisis, Travel Guidelines: ہندوستانی سرکار نے بھی بیرون ممالک سے آنے والے مسافروں کیلئے جاری پہلے کی گائیڈلائنس میں ترمیم کی ہے ۔ مرکزی وزرات صحت نے اتوار کو یکم دسمبر سے لاگو ہونے والے ضوابط میں تبدیلی کرتے ہوئے نئی گائیڈلائنس جاری کی ہے ۔

    • Share this:
      نئی دہلی : کورونا وائرس کے نئے ویریئنٹ نے پوری دنیا میں افراتفری مچا رکھی ہے ۔ سفری پابندیوں میں چھوٹ دینے کے بعد سبھی ممالک پھر سے سفری قوانین میں ترمیم کرنے میں لگ گئے ہیں ۔  اس درمیان ہندوستانی سرکار نے بھی بیرون ممالک سے آنے والے مسافروں کیلئے جاری پہلے کی گائیڈلائنس میں ترمیم کی ہے ۔ مرکزی وزرات صحت نے اتوار کو یکم دسمبر سے لاگو ہونے والے ضوابط میں تبدیلی کرتے ہوئے نئی گائیڈلائنس جاری کی ہے ۔ اب مسافر کو سفر سے پہلے ایئر سوویدھا پورٹل پر کورونا آرٹی ۔ پی سی آر ٹیسٹ کی منفی رپورٹ اپ لوڈ کرنا لازمی ہوگا ۔

      غور طلب ہے کہ جنوبی افریقہ کے بوتسوانا میں کورونا وائرس کے نئے ویریئنٹ اومیکران کے سامنے آنے کے بعد ہندوستان اپنی ٹریول گائیڈلائنس کا جائزہ لے رہا ہے ۔ اومیکران ویریئنٹ کے بڑھتے معاملات کے بعد وزیر اعظم مودی نے بھی بین الاقوامی سفری پابندیوں میں چھوٹ دئے جانے کے منصوبہ کا وزرا اور اہلکاروں کو پھر سے جائزہ لینے کی ہدایت دی ہے ۔

      اتوار کو سرکار نے کہا کہ یکم دسمبر سے ہندوستان آنے والے مسافروں کو پورٹل پر اپنی کووڈ ٹیسٹ کی نگیٹو رپورٹ اپ لوڈ کرنی ہوگی اور ساتھ ہی مسافروں کو اپنے پچھلے 14 دن کے سفر کی تفصیل بھی دینی ہوگی ۔

      غور طلب ہے کہ ہندوستانی حکومت نے حال ہی میں اس بات کا اعلان کیا تھا کہ سرکار 15 دسمبر سے مستقل طور پر بین الاقوامی اڑانوں کو شروع کردے گا ۔ سرکار کے اس فیصلہ کے ایک دن کے بعد ہی جنوبی افریقہ سے کووڈ کے نئے ویریئنٹ کا انکشاف ہوا تھا ۔

      ہندوستان نے ان ممالک کو ریڈلسٹ میں ڈالا

      کورونا کے نئے ویریئنٹ کے معاملات تیز رفتاری سے بڑھ رہے ہیں ۔ جنوبی افریقہ ، بوتسوانا ، اسرائیل ، ہانگ کانگ میں اس انفیکشن کے معاملات سامنے آچکے ہیں ۔ اب اس ویریئنٹ کا نیا معاملہ یوکے میں سامنے آیا ہے ، جہاں اس کے دو پازیٹیو معاملات ملے ہیں ۔

      ہندوستان نے پہلے ہی ان ممالک کو رسک والے ممالک کی فہرست میں ڈال رکھا ہے ۔ اس کا صاف مطلب یہ ہے کہ ان ممالک سے آنے والے یا پھر ان ممالک میں جانے والے مسافروں کو کئی طرح کی جانچ سے گزرنا ہوگا ۔

      قومی، بین الاقوامی اور جموں وکشمیر کی تازہ ترین خبروں کےعلاوہ  تعلیم و روزگار اور بزنس کی خبروں کے لیے نیوز18 اردو کو ٹویٹر اور فیس بک پر فالو کریں ۔

      Published by:Imtiyaz Saqibe
      First published: