உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    وارانسی : مہلوکین کے اہل خانہ کیلئے معاوضہ کا اعلان ، ہلاکتوں کی تعداد 24 تک پہنچی

    وارانسی۔  اترپردیش میں وارانسی کے رام نگر علاقے میں آج راج گھاٹ پر "جے گرودیو" کی شوبھا یاترا کے دوران مچی بھگدڑ میں مرنے والوں کی تعداد بڑھ کر 24 ہو گئی ہے۔

    وارانسی۔ اترپردیش میں وارانسی کے رام نگر علاقے میں آج راج گھاٹ پر "جے گرودیو" کی شوبھا یاترا کے دوران مچی بھگدڑ میں مرنے والوں کی تعداد بڑھ کر 24 ہو گئی ہے۔

    وارانسی۔ اترپردیش میں وارانسی کے رام نگر علاقے میں آج راج گھاٹ پر "جے گرودیو" کی شوبھا یاترا کے دوران مچی بھگدڑ میں مرنے والوں کی تعداد بڑھ کر 24 ہو گئی ہے۔

    • UNI
    • Last Updated :
    • Share this:

      وارانسی۔  اترپردیش میں وارانسی کے رام نگر علاقے میں آج راج گھاٹ پر "جے گرودیو" کی شوبھا یاترا کے دوران مچی بھگدڑ میں مرنے والوں کی تعداد بڑھ کر 24 ہو گئی ہے۔ شدید طورپرزخمی افراد میں سے چار کی حالت نازک ہے۔ ریاست کے ایڈیشنل پولیس ڈائریکٹر جنرل (امن وقانون) دلجیت چودھری نے آج شام جائے حادثہ کا جائزہ لینے کے بعد نامہ نگاروں کو بتایا کہ حادثے میں مرنے والوں کی تعداد 24 تک پہنچ گئی ہے، جبکہ چار لوگوں کے زخمی ہونے کی اطلاع ہے۔ انہوں نے بتایا کہ امن و قانون قائم رکھنے کے لئے آج بڑی تعداد میں پولیس اہلکاروں کو جگہ جگہ تعینات کیا گیا ہے۔ اس کے علاوہ پولیس کی 10 فاضل کمپنیاں کل تک یہاں تعینات کی جائیں گی۔ مسٹر چودھری نے بتایا کہ واقعہ کی جلد تفتیش کرکے قصورواروں کے خلاف مناسب کارروائی کی جائے گی۔


      سرکاری ذرائع نے بتایا کہ ہلاک ہونے والوں میں بیشتر خواتین ہیں۔ مرنے والوں کی شناخت نہیں ہو سکی ہے۔ لاشوں کی شناخت کی کوشش کی جا رہی ہے۔ زخمیوں کا علاج کاشی ہندو یونیورسٹی (بی ایچ یو) کے ٹراما سینٹر، شیو پرساد گپت ڈویزنل اسپتال، لال بہادر شاستری اسپتال میں کیا جا رہا ہے۔ ٹراما سینٹر میں داخل چار مریضوں کی حالت انتہائی نازک ہے۔
      وزیر اعلی اکھلیش یادو نے ہلاک ہونے والوں کے لواحقین کو پانچ پانچ لاکھ روپے اور زخمیوں کو 50 ۔50 ہزار روپے کی امدادی رقم دیئے جانے کا اعلان کیا ہے۔ زخمیوں کا علاج سرکاری خرچ پر کیا جائے گا۔ ضلعی افسر وجے کرن آنند نے بتایا کہ شوبھا یاترا کے منتظمین نے محض 3000 لوگوں کے شامل ہونے کی اطلاع دی تھی، لیکن ایک لاکھ سے زیادہ لوگوں کے آنے سے صورتحال بگڑ گئی۔ انہوں نے بتایا کہ مختلف اسپتالوں میں زخمیوں کا علاج کیا جا رہا ہے۔ انہوں نے بتایا کہ پروگرام منسوخ کرنے کی ہدایت دی گئی ہے۔ کئی عینی شاہدین نے بتایا کہ راج گھاٹ پل پر بڑی تعداد میں لوگ ایک ساتھ پیدل چل رہے تھے، اسی درمیان پل کے ٹوٹنے کی افواہ سے بھگدڑ مچ گئی۔ گنگا ندی پر وارانسی کے شہری علاقے سے رام نگر کے درمیان بنے اس پل کے دونوں طرف کئی کلومیٹر کا ٹریفک جام ہو گیا تھا۔


      مسٹر آنند نے بتایا کہ جام کی وجہ سے ایمبولینسوں کو پہنچنے میں بھی کافی وقت لگ گیا۔ پولیس اہلکاروں نے زخمیوں کو بھاری مشقت کے بعد جائے واقعہ سے نکالا۔ آٹو سے زخمیوں کو کچھ دور نکالنے کے بعد ایمبولینسوں سے اسپتال تک پہنچایا گیا۔ٹریفک جام کی وجہ سے فوری طور پر ڈویزنل یا بی ایچ یو میں زخمیوں کو لانا ممکن نہیں تھا۔ واقعہ کی اطلاع ملتے ہی کمشنر نتن رمیش گوکرن اور ضلعی افسر وجے کرن آنند سمیت پولیس کے دیگر اعلی افسران کسی طرح موقع پر پہنچے۔ حادثے کے گھنٹوں بعد بھی رام نگر علاقے میں کنٹیسر میں واقع پروگرام کے مقام کی طرف ہزاروں "جے گرودیو" کے پیروکاروں کے آنے کا سلسلہ جاری رہا اورانتظامیہ کو اسے کنٹرول کرنے میں خاصی مشقت کرنی پڑی۔
      انہوں نے بتایا کہ شوبھا یاترا وارانسی کے شہری علاقے ملدہیا سے نکالی گئی تھی اور راج گھاٹ ہوتے ہوئے کنٹیسر جا رہی تھی۔ اسی درمیان پل پر بھگدڑ مچ گئی۔


      دریں اثنا  وزیر اعظم نریندر مودی نے اتر پردیش کے وارانسی میں آج ہوئی بھگدڑ میں مرنے والوں کے لواحقین کو دو دو لاکھ اوربری طرح زخمیوں کو 50۔50 ہزار روپے کی مدد دینے کا اعلان کیا ہے۔ مسٹر مودی نے وارانسی میں مذہبی تقریب میں ہوئی بھگدڑ میں ہلاک ہونے والوں کے تئیں رنج و غم کا اظہار کیا ہے۔ انہوں نے کہا، '' وارانسی میں بھگدڑ میں لوگوں کے مارے جانے سے گہرا دکھ پہنچا ہے. "انہوں نے متاثرین کے ساتھ ہمدردی کا اظہار کرتے ہوئے زخمیوں کی جلد صحت مند ہونے کی دعا کی ۔


      کانگریس صدر سونیا گاندھی نے بھی بھگدڑ میں لوگوں کے مارے جانے اور زخمی ہونے کے واقعہ پر گہرے رنج و غم کا اظہار کیا ہے۔  وزیر اعظم نے کہا کہ حکام کو متاثرین کی ہر ممکن مدد فراہم کرانے کی ہدایت دی ہے۔ انہوں نے کہا کہ وزیر اعظم ریلیف فنڈ سے حادثے میں ہلاک ہونے والے لوگوں کے اہل خانہ کو دو دو لاکھ روپے اور شدید طور سے زخمی افراد کو 50 ۔50 ہزار روپے دیے جائیں گے۔

      First published: