ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

ڈی ڈی سی اے معاملے میں جیٹلی سراسر جھوٹ بول رہے ہیں: عام آدمی پارٹی

نئی دہلی۔ عام آدمی پارٹی نے دہلی اینڈڈسٹرکٹ کرکٹ ایسوسی ایشن (ڈی ڈی سی اے) میں مبینہ مالی بے ضابطگیوں کے معاملے میں مرکزی وزیر ارون جیٹلی پر آج جھوٹ بولنے کا الزام لگاتے ہوئے پھر سے ان کے استعفی کا مطالبہ کیا ہے۔

  • UNI
  • Last Updated: Dec 30, 2015 03:24 PM IST
  • Share this:
  • author image
    NEWS18-Urdu
ڈی ڈی سی اے معاملے میں جیٹلی سراسر جھوٹ بول رہے ہیں: عام آدمی پارٹی
نئی دہلی۔ عام آدمی پارٹی نے دہلی اینڈڈسٹرکٹ کرکٹ ایسوسی ایشن (ڈی ڈی سی اے) میں مبینہ مالی بے ضابطگیوں کے معاملے میں مرکزی وزیر ارون جیٹلی پر آج جھوٹ بولنے کا الزام لگاتے ہوئے پھر سے ان کے استعفی کا مطالبہ کیا ہے۔

نئی دہلی۔ عام آدمی پارٹی نے دہلی اینڈڈسٹرکٹ کرکٹ ایسوسی ایشن (ڈی ڈی سی اے) میں مبینہ مالی بے ضابطگیوں کے معاملے میں مرکزی وزیر ارون جیٹلی پر آج جھوٹ بولنے کا الزام لگاتے ہوئے پھر سے ان کے استعفی کا مطالبہ کیا ہے۔ عام آدمی پارٹی کے لیڈر آشوتوش ، دیپک واجپئی، دلیپ پانڈے اور سوربھ بھردواج نے دعوی کیا کہ مسٹر جیٹلی کا یہ کہنا کہ وہ ڈی ڈی سی اے کے ایکزیکیوٹیوصدر تھے اور ان کی ایسوسی ایشن کے روزمرہ کے کاموں میں مداخلت نہیں تھی بالکل جھوٹ ہے۔ لیڈروں نے مسٹر جیٹلی کے ذریعہ راجیہ سبھا میں اپوزیشن کے لیڈر کے عہدہ پر رہتے ہوئے 2011میں اس وقت کے پولیس کمشنر اور 2012میں خصوصی پولیس کمشنر رنجیت نارائن کو لکھے خطوط پیش کرتے ہوئے دعوی کیا کہ مسٹر جیٹلی ڈی ڈی سی اے کے کاموں میں مسلسل دخل دیتے تھے اور آئینی عہدہ پر رہتے ہوئے انہیں بدعنوانی کے معاملے کو روکنے کے لئے مداخلت کا کوئی حق نہیں تھا۔


آشوتوش نے کہاکہ مسٹر جیٹلی کے ذریعہ لکھے ان دونوں خطوط سے یہ ثابت ہوتا ہے کہ انہیں ڈی ڈی سی اے میں چل رہے ہر معاملے کے بارے میں معلوم تھا۔ انہوں نے کہاکہ راجیہ سبھا میں اپوزیشن کا لیڈر رہتے ہوئے وہ بدعنوانی کے معاملے کی جانچ کو اپنے عہدہ کا ناجائز استعمال کرتے ہوئے متاثر کررہے تھے تو آج تو وہ اقتدار میں ہیں اور دہلی پولیس مرکزی حکومت کے ماتحت ہے۔ایسی حالت میں وہ کچھ بھی کرسکتے ہیں۔ ایسے میں اس معاملے کی غیرجانبدارانہ جانچ ہواس کے لئے ضروری ہے کہ مسٹر جیٹلی استعفی دیں۔ مسٹر جیٹلی کاڈی ڈی سی اے میں سرگرم رول تھا اور وہ لوگوں کو بچانے میں مصروف تھے۔


مسٹرآشوتوش نے کہاکہ ڈی ڈی سی اے گھپلہ کے تعلق سے عام آدمی پارٹی کی طرف سے پہلے پوچھے گئے سوالات کے جواب مسٹر جیٹلی نے اب تک نہیں دئیے ہیں۔ آج ہم پھر ایسوسی ایشن میں کروڑ وں روپے کے گھپلے میں مسٹر جیٹلی کے راست طورپر شامل ہونے اور بدعنوانی میں ملوث لوگوں کو بچانے کے سلسلہ میں پھر سے پانچ سوالات پوچھ رہے ہیں۔

آج پوچھے گئے پانچ سوالات میں عام آدمی پارٹی کے لیڈروں نے کہاکہ مسٹر جیٹلی یہ بتائیں کہ کیا یہ صحیح نہیں ہے کہ مسٹر جیٹلی نے راجیہ سبھا میں اپوزیشن کا لیڈر رہتے ہوئے اپنے عہدہ کا بے جا استعمال کرکے پولیس پر دباؤ نہیں ڈالا ؟ معروف وکیل رہتے ہوئے کیا وہ اس بات سے انکار کریں گے کہ اس معاملے میں انہوں نے پولیس کی تفتیش میں رخنہ نہیں ڈالا؟کس بنیاد پر مسٹر جیٹلی اس نتیجہ پر پہنچے کہ سنڈیکیٹ بینک کے معاملے میں کوئی جرم نہیں ہوا؟ مسٹر جیٹلی اس وقت طاقتور وزیر ہیں اور دہلی پولیس مرکزی حکومت کے ماتحت ہے۔ ایسے میں ان کا کیا عہدہ پر رہنا مناسب ہے۔ ڈی ڈی سی اے کی تفتیش کو گمراہ کرنے کی کوشش میں ان کا کیا مفاد ہے؟ 


First published: Dec 30, 2015 03:24 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading