ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

ہوجائیں ہوشیار ، آگر آپ نے یہاں پانی کا غلط استعمال کیا تو جانا پڑے گا جیل

مہوبہ : خشک سالی کی مار جھیل رہے بندیل کھنڈ کے مہوبہ ضلع میں پانی کی شدید قلت کے پیش نظر حکم امتناعی نافذ کرکے پانی کا غلط استعمال کرنے والوں کو گرفتار کر کے جیل بھیجنے کی ہدایت دی گئی ہے۔

  • UNI
  • Last Updated: Apr 23, 2016 07:00 PM IST
  • Share this:
  • author image
    NEWS18-Urdu
ہوجائیں ہوشیار ، آگر آپ نے یہاں پانی کا غلط استعمال کیا  تو جانا پڑے گا جیل
مہوبہ : خشک سالی کی مار جھیل رہے بندیل کھنڈ کے مہوبہ ضلع میں پانی کی شدید قلت کے پیش نظر حکم امتناعی نافذ کرکے پانی کا غلط استعمال کرنے والوں کو گرفتار کر کے جیل بھیجنے کی ہدایت دی گئی ہے۔

مہوبہ : خشک سالی کی مار جھیل رہے بندیل کھنڈ کے مہوبہ ضلع میں پانی کی شدید قلت کے پیش نظر حکم امتناعی نافذ کرکے پانی کا غلط استعمال کرنے والوں کو گرفتار کر کے جیل بھیجنے کی ہدایت دی گئی ہے۔ ڈسٹرکٹ مجسٹریٹ سشیل پرتاپ سنگھ نے آج یہاں بتایا کہ پانی کی قلیت کے سبب حالات بگڑنے کے اندیشہ کے پیش نظر پورے ضلع میں دفعہ 144 نافذ کی گئی ہے۔اس کے تحت عوامی استعمال کے پانی کے بے جا استعمال اور اسے آلودہ کرنے والوں کے خلاف مقدمہ درج کرکے قانونی کارروائی کی جائے گی۔

انہوں نے بتایا کہ کنووں، آبی ذخائر، سرکاری ہینڈ پمپوں پر غیرقانونی طریقے سے قبضہ کرنے اور ان کے پانی کے غلط استعمال کو سنگین جرم کے زمرے میں رکھا گیا ہے۔ پولیس کو اس قسم کے معاملات میں فوری کارروائی کرنے کی ہدایت دی گئی ہے۔ ڈپٹی ضلع مجسٹریٹ نے بتایا کہ گرمی کے دن بدن شدید ہونے کے ساتھ ہی بندیل کھنڈ کے پٹھاری علاقہ والے اس ضلع میں پانی کے بحران میں اضافہ ہورہا ہے۔ارمل باندھ کے جواب دے جانے سے مہوبہ ہیڈ کوارٹر کے 12 وارڈوں کے علاوہ چالیس ہزار کی آبادی والے کبرئی قصبے میں پانی کی سپلائی ٹینکروں کے ذریعے شروع کی گئی ہے.اب تک یہاں پانی کی سپلائی کبرئی باندھ سے کی جاتی تھی۔

تقریبا ڈیڑھ سو مربع کلومیٹر رقبہ کے اس باندھ میں ان دنوں دھول اڑ رہی ہے۔ انہوں نے کہا کہ انتظامیہ آنے والے دنوں میں بیلاتال کلپہاڑ سمیت علاقے کے تقریباََ بیس گاوں کے حالات سے کافی پریشان ہے جنہیں پانی کی فراہمی کرنے والا بیلاساگر تالاب سوکھنے والا ہے۔ ایک دہائی سے بارش کی بے رخی جھیل رہے اس علاقے میں یہ پہلا موقع ہے جب اپریل کے مہینے میں ہی حالت اتنی سنگین ہے۔ پانی کے نہ ہونے کے سبب یہاں کی شہری اور دیہی پینے کے پانی منصوبے ایک ایک کر کے دم توڑ رہے ہیں۔کنووں اور تالاب کے ساتھ ساتھ چھوٹے بڑے باندھ سوکھ کر کھیل کے میدان بنتے جا رہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ زمینی پانی کے سطح 70میٹر نیچے کھسک جانے سے ہینڈپمپ بھی ساتھ چھوڑتے جا رہے ہیں۔ پانی اتر جانے سے کی وجہ سے 850ہینڈپمپوں کو ریبور کیا جارہا ہے۔

First published: Apr 23, 2016 07:00 PM IST