ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

اے ایم یو کے بعد جامعہ پر نشانہ،فرقہ پرستوں نے لگائے بھڑکاؤ نعرے

علی گڑھ مسلم یونیورسٹی تنازع کے جامعہ ملیہ اسلامیہ پہنچنے اور کل ہوئی نعرے بازی کے خلاف طلبا کافی ناراض ہیں۔طلبا اس پر کارروائی کا مطالبہ کر رہے ہیں۔

  • Share this:
اے ایم یو کے بعد جامعہ پر نشانہ،فرقہ پرستوں نے لگائے بھڑکاؤ نعرے
جامعہ ملیہ اسلامیہ ۔ فائل فوٹو

علی گڑھ مسلم یونیورسٹی تنازع اب جامعہ ملیہ اسلامیہ پہنچ گیاہے۔جامعہ  میں اس وقت دیکھنے کو ملا جب جامعہ کے احاطے میں آر ایس ایس اسٹوڈینٹ تنظیم اکھل بھارتیہ پریشد (اے بی وی پی)  نے مارچ نکال کرنعرے بازی شروع کر دی۔اے بی وی پی کے طلبا نے نفرت انگیز نعرے لگائے ۔ جناحکے حامی شرم کرو،ہندوؤں کو ڈرانا بند کرو اور جامعہ میں ہندو محفوظ نہیں ہیں ،جناح کی اولاد جیسے متنازع نعرے لگائے تھے۔نعرے بازی سے طلبا کافی ناراض ہیں۔طلبا اس پر کارروائی کا مطالبہ کر رہے ہیں۔جامعہ کے طلبا یہ سب دیکھ کر حیران تھے کہ اچانک ایسا کیسے ہو گیا؟


جامعہ کے طلبا کا کہنا ہے کہ وہ جامعہ کو بدنام کرنے اور فساد کرنے کرنے کیلئے ایسا کر رہے ہیں۔واضح ہو کہ جامعہ میں امتحان چل رہے ہیں اور ایسے وقت میں یہ حرکت قابل تشویش ہے۔


اس لئے ایسے لوگوں کے کلاف کارروائی ہونی چاہئے۔طلبا نے کہا جناح سے جامعہ کا یا کسی مسلمان کا کوئی لینا دینا نہیں ہے۔یہ صرف اور صرف ماحول خراب کرنے کیلئے کیا جا رہا ہے۔تو وہیں دوسری طرف جامعہ انتطامیہ یہ کہہ کر اپنا دامن جھاڑ  رہا ہے کہ معاملہ یونیورسٹی کیمپس سے باہر کا ہے۔

First published: May 09, 2018 01:41 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading