ہوم » نیوز » No Category

اسکول نے بھیجا ایک کروڑ روپے کا نوٹس ، ماں باپ بھیک مانگنے پر ہوئے مجبور

آگرہ : یوپی کے آگرہ ضلع کے ایک اسکول کے تغلقی فرمان کے بعد اب ایک طالب علم کے غریب ماں باپ بھیک مانگنے پر مجبور ہیں ۔

  • ETV
  • Last Updated: May 13, 2016 09:37 AM IST
  • Share this:
  • author image
    NEWS18-Urdu
اسکول نے بھیجا ایک کروڑ روپے کا نوٹس ، ماں باپ بھیک مانگنے پر ہوئے مجبور
آگرہ : یوپی کے آگرہ ضلع کے ایک اسکول کے تغلقی فرمان کے بعد اب ایک طالب علم کے غریب ماں باپ بھیک مانگنے پر مجبور ہیں ۔

آگرہ : یوپی کے آگرہ ضلع کے ایک اسکول کے تغلقی فرمان کے بعد اب ایک طالب علم کے غریب ماں باپ بھیک مانگنے پر مجبور ہیں ۔ دراصل  اسکول انتظامیہ سے اپنے بچہ کے فیل ہونے کی وجہ پوچھنا والدین کو اس قدر مہنگا پڑ گیا کہ وہ اپنے کنبہ کے ساتھ سڑکوں پر بھیک مانگنے پر مجبور ہو گئے ہیں۔


خیال رہے کہ شہر کے ایک مشہور اسکول سینٹ فرانسس كنوینٹ کی انتظامیہ نے طالب علم کے والد کو ایک کروڑ روپے کا ہتک عزت کا نوٹس بھیجا ہے ۔


پیشے سے مستری صغیر احمد اپنے بیٹے شیجان کا داخلہ شہر کے ٹاپ اسکول سینٹ فرانسس كنوینٹ میں کرایا تھا ۔ اس مرتبہ آٹھویں جماعت میں وہ فیل ہو گیا ۔ اس کی اطلاع جب صغیر کو ہوئی ، تو اس نے قانون کا حوالہ دیتے ہوئے اسکول انتظامیہ سے فیل کرنے کی وجہ پوچھی اور اس کے بعد انتظامیہ سے شکایت کی ، جس کے جواب  میں اسکول انتظامیہ نے انہیں ایک کروڑ روپے کو نوٹس بھیج دیا۔


صغیر کا کہنا ہے کہ اصولوں کے مطابق آٹھویں تک کسی کو فیل نہیں کیا جا سکتا ہے ۔ میں نے اس کی شکایت انتظامیہ سے کی ، اس لئے اس سے ناراض ہو کر اسکول انتظامیہ نے مجھے ایک کروڑ کا نوٹس بھیجا ہے اور اس کے لئے مجھے صرف دس دن کی مہلت دی گئی ہے ۔

انہوں نے کہا کہ میں غریب ہوں ، میں وزیر اعظم اور وزیر اعلی فنڈ سے مدد مانگتا ہوں ، نہیں تو اس کے لئے میں چندہ جمع کروں گا ۔
First published: May 13, 2016 09:37 AM IST