உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    کانگریس مسلمانوں کو تعلیم کے میدان میں پسماندہ رکھنے کی سازش میں پیش پیش رہی : سید احمد بخاری

    جامع مسجد دہلی کے شاہی امام سید احمد بخاری: فائل فوٹو

    جامع مسجد دہلی کے شاہی امام سید احمد بخاری: فائل فوٹو

    غریب نواز ایجوکیشنل اینڈ ڈیولپمنٹ کونسل کی دعوت پر لکھنؤ میں تعلیمی ماہرین، علما اور مشائخ کرام کا ایک نمائندہ اجلاس بعنوان تعلیمی و ترقی کانفرنس منعقد ہورہا ہے۔

    • UNI
    • Last Updated :
    • Share this:
      نئی دہلی: غریب نواز ایجوکیشنل اینڈ ڈیولپمنٹ کونسل کی دعوت پر لکھنؤ میں تعلیمی ماہرین، علما اور مشائخ کرام کا ایک نمائندہ اجلاس بعنوان تعلیمی و ترقی کانفرنس منعقد ہورہا ہے۔ اس کانفرنس کی کامیابی کی دعا کرتے ہوئے شاہی جامع مسجد کے امام سید احمد بخاری نے کہا کہ یہ ایک ناقابل تردید حقیقت ہے کہ مسلمانوں کی تعلیمی بدحالی کی موجودہ صورت حال کی اصل ذمہ دار وہ سیاسی جماعتیں ہیں جنہوں نے اقتدار حاصل کرنے کے لئے مسلمانوں سے دلفریب وعدے ضرور کئے لیکن اقتدار میں آنے کے بعد ایک منظم سازش کے تحت مسلمانوں کو تعلیم کے میدان میں پسماندہ رکھا گیا۔ اس سازش میں کانگریس پیش پیش رہی کیونکہ آزادی کے بعد کانگریس تقریباً65 سال ملک میں اقتدار میں رہی ہے۔ در حقیقت مسلمانان ہند کو کچھ دینے کے نام پر جھوٹے اور دلفریب وعدوں کے علاوہ کچھ نہیں ملا۔
      انہوں نے مزید کہا کہ ہمیں اپنا احتساب بھی کرنا ہوگا کہ ان حالات کے لئے ہم کتنے ذمہ دار ہیں؟ ہم ملت کے اتحاد کی بات تو کرتے ہیں لیکن ہم خود مختلف خانوں میں بٹے ہوئے ہیں، ہمیں اس بکھرے ہوئے شیرازہ کو سمیٹنا ہوگا تاکہ متحدہ طور سے ہم سیاسی جماعتوں پر اثر انداز ہوسکیں اسی صورت میں ہم مسلمانوں کے سلب شدہ حقوق حاصل کرنے میں کامیاب ہوسکتے ہیں۔ اس کے بغیر کوئی بھی تحریک کامیابی سے ہم کنار نہیں ہوسکتی۔
      First published: