உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    مہاراشٹر میں مہا وکاس اگھاڑی کے راجیہ سبھا امیدواروں کی حمایت، AIMIM نے کیا اعلان

    اسد الدین اویسی فائل فوٹو

    اسد الدین اویسی فائل فوٹو

    این سی پی کے سربراہ شرد پوار، کانگریس کے جنرل سکریٹری ملکارجن کھرگے اور بی جے پی لیڈر اور مرکزی وزیر اشونی وشنو اپنی حکمت عملی کو حتمی شکل دینے کے لیے ممبئی میں اپنی اپنی پارٹیوں کے رہنماؤں کے ساتھ مصرف ہیں۔ ایسے میں مجلس کی جانب سے یہ اعلان معنی خیز بتایا جارہا ہے۔

    • Share this:
      راجیہ سبھا انتخابات کے ضمن میں مہاراشٹر میں مجلس اتحاد المسلیمین (AIMIM) نے نئی پہل کی ہے۔ ریاستی یونٹ کے صدر امتیاز جلیل (Imtiaz Jaleel) نے جمعہ کی صبح کہا کہ آل انڈیا مجلس اتحاد المسلمین (اے آئی ایم آئی ایم) نے مہاراشٹر میں راجیہ سبھا انتخابات میں مہا وکاس اگھاڑی (ایم وی اے) کے امیدواروں کو ووٹ دینے کا فیصلہ کیا ہے۔

      امتیاز جلیل نے کہا کہ یہ فیصلہ بھارتیہ جنتا پارٹی (BJP) کو شکست دینے کے لیے کیا گیا ہے لیکن ایم وی اے حکومت میں شراکت دار شیو سینا کے ساتھ پارٹی کے سیاسی/نظریاتی اختلافات جاری رہیں گے۔

      اے آئی ایم آئی ایم لیڈر نے کہا کہ پارٹی نے دھولیا اور مالیگاؤں میں ہمارے ایم ایل ایز کے حلقوں کی ترقی سے متعلق کچھ شرائط رکھی ہیں۔ انھوں نے ریاستی حکومت سے مہاراشٹر پبلک سروس کمیشن میں اقلیتی رکن کی تقرری اور مہاراشٹر وقف بورڈ میں بجت بڑھانے کے لیے اقدامات کرنے کا مطالبہ کیا ہے۔

      جلیل نے ٹویٹ کیا کہ ’’مسلمانوں کے لیے تحفظات کا بھی مطالبہ کیا ہے۔ واضح رہے کہ مہاراشٹر میں دو دہائیوں سے زیادہ کے بعد راجیہ سبھا انتخابات میں مقابلہ دیکھنے کو ملے گا کیونکہ چھ سیٹوں کے لیے سات امیدوار میدان میں ہیں۔ جمعرات کے روز سیاسی جماعتیں غیر یقینی ساتویں نشست کے لیے اپنی حکمت عملی کو ٹھیک کرنے کے لیے مصروف مذاکرات میں مصروف تھیں۔

      پی ٹی آئی نے حکمراں اتحاد کے ذرائع کا حوالہ دیتے ہوئے اطلاع دی کہ ممبئی کے مختلف ہوٹلوں اور ریزورٹس میں مقیم شیو سینا، این سی پی اور کانگریس کے اراکین اسمبلی پولنگ شروع ہونے سے عین قبل ریاستی اسمبلی کے لیے روانہ ہوں گے۔

      مزید پڑھیں: IND vs SA: ریشبھ پنت بنے ٹیم انڈیا کے کپتان تو گرل فرینڈ ایشا نیگی نے لکھا خاص پیغام، کہی یہ بات

      این سی پی کے سربراہ شرد پوار، کانگریس کے جنرل سکریٹری ملکارجن کھرگے اور بی جے پی لیڈر اور مرکزی وزیر اشونی وشنو اپنی حکمت عملی کو حتمی شکل دینے کے لیے ممبئی میں اپنی اپنی پارٹیوں کے رہنماؤں کے ساتھ مصرف ہیں۔ ایسے میں مجلس کی جانب سے یہ اعلان معنی خیز بتایا جارہا ہے۔

      یہ بھی پڑھئے : Pak کیلئے اچھی خبر، ٹی 20 میں ہیٹ ٹرک لینے والے کھلاڑی کو ملی دوبارہ گیند بازی کی اجازت

      مرکزی وزیر پیوش گوئل، انیل بونڈے، دھننجے مہادک (بی جے پی)، پرفل پٹیل (این سی پی)، سنجے راوت اور سنجے پوار (شیو سینا)، اور عمران پرتاپ گڑھی (کانگریس) راجیہ سبھا کی چھ نشستوں کے لیے میدان میں ہیں۔
      Published by:Mohammad Rahman Pasha
      First published: