உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    سماجوادی پارٹی میں پھر گھمسان تیز، اکھلیش نے شیو پال سمیت 4 کو لیڈروں کو کیا برخاست

    سماجوادی پارٹی میں گھمسان ​​عروج پر پہنچ گیا ہے ۔ اتر پردیش میں وزیر اعلی اکھلیش یادو اور سماج وادی پارٹی کے ریاستی صدر اور سینئر وزیر شیو پال سنگھ یادو کے درمیان جاری رسہ کشی اب ​​کھل کر سامنے آ گئی ہے ۔

    سماجوادی پارٹی میں گھمسان ​​عروج پر پہنچ گیا ہے ۔ اتر پردیش میں وزیر اعلی اکھلیش یادو اور سماج وادی پارٹی کے ریاستی صدر اور سینئر وزیر شیو پال سنگھ یادو کے درمیان جاری رسہ کشی اب ​​کھل کر سامنے آ گئی ہے ۔

    سماجوادی پارٹی میں گھمسان ​​عروج پر پہنچ گیا ہے ۔ اتر پردیش میں وزیر اعلی اکھلیش یادو اور سماج وادی پارٹی کے ریاستی صدر اور سینئر وزیر شیو پال سنگھ یادو کے درمیان جاری رسہ کشی اب ​​کھل کر سامنے آ گئی ہے ۔

    • Pradesh18
    • Last Updated :
    • Share this:
      نئی دہلی : سماجوادی پارٹی میں گھمسان ​​عروج پر پہنچ گیا ہے ۔ اتر پردیش میں وزیر اعلی اکھلیش یادو اور سماج وادی پارٹی کے ریاستی صدر اور سینئر وزیر شیو پال سنگھ یادو کے درمیان جاری رسہ کشی ایک مرتبہ پھر شباب پر پہنچ گئی ہے ۔ ایک طرف جہاں رام گوپال یادو نے کارکنوں کو خط لکھ کر حامیوں اور مخالفین کے درمیان واضح لکیر کھینچ دی ہے ، وہیں دوسری طرف وزیر اعلی اکھلیش یادو نے آج ممبران اسمبلی کی ایک میٹنگ طلب کی ، جس میں شیوپال سنگھ سمیت چار لیڈروں کو برخاست کردیا۔ اکھلیش کے اس قدم کے بعد پارٹی میں ہلچل تیز ہوگئی ہے۔ ادھر شیوپال یادو ایس پی سپریمو ملائم سنگھ سے ملاقات کررہے ہیں ۔
      بارہ بنکی سے ایم ایل سی راجیش یادو نے بتایا کہ آج کی میٹنگ میں تقریبا تمام لیڈران موجود تھے۔ اس دوران وزیر اعلی اکھلیش نے کہا کہ جب میں چھوٹا تھا تو کسی نے نیتا جی کو گالی دے دی تھی، میں نے اس کے سر پر پتھر مار دیا تھا جبکہ اس وقت میں بہت چھوٹا تھا۔ بیٹے کے طور پر کہتا هوں کہ باپ بیٹے کے درمیان جو بھی آئے گا ، اس کو بخشا نہیں جائے گا۔ وزیر اعلی کے طور پر کہتا هوں کہ جو لوگ امر سنگھ کے قریب آئے گا ، وہ کابینہ سے باہر جائے گا۔
      راجیش یادو کے مطابق وزیر اعلی نے مزید کہا جو لوگ امر سنگھ کے ساتھ ہیں ، ان کو کابینہ میں رہنے کا حق نہیں۔ کل نیتا جی کی میٹنگ میں جائیں گے اور 5 اکتوبر کے پروگرام میں بھی جائیں گے۔ جو بھی باپ بیٹے کے درمیان آئے گا، اسے باہر کر دیا جائے گا۔ مسٹر شیو پال یادو کے ساتھ برخاست ہونے والے چار وزراء میں وزیر سیاحت اوم پرکاش سنگھ،خاتون کی فلاح و بہبود کی وزیر مملکت شاداب فاتمہ اور سائنس اور ٹیکنولوجی کے وزیر نارد رائے شامل ہیں۔
      قبل ازیں ایس پی سپریمو ملائم سنگھ کے بھائی رام گوپال یادو نے اکھلیش کے مخالفین پرنشانہ سادھا ۔ انہوں نے کارکنوں کے نام ایک خط لکھا ہے جس میں اکھلیش مخالفین کی شدید تنقید کی ہے۔ مخالفین اکھلیش کی رتھ یاترا میں رکاوٹ ڈالنے کی سازش کر رہے ہیں ۔ رتھ یاترا مخالفین کے گلے کی ہڈی بن گئی ہے ۔
      رام گوپال نے لکھا ہے کہ کچھ لوگ غلط بیان بازی کر رہے ہیں ۔ ہماری سوچ مثبت ہے، جبکہ مخالفین کی سوچ منفی ہے ۔ وہ اکھلیش کو شکست دینے کی سازش رچ رہے ہیں ۔ صلح کی کوشش کے ذریعہ اکھلیش کا سفر روکنے کی سازش کی جا رہی ہے ۔
      رام گوپال نے لکھا کہ اکھلیش کی مخالفت کرنے والے اسمبلی کا منہ نہیں دیکھ پائیں گے ۔ نہ ڈریں نہ تذبذب کا شکار ہوں ، جہاں اکھلیش وہاں کامیابی ۔ انہوں نے کارکنوں سے اکھلیش کی حمایت میں متحد ہونے کی اپیل کی تاکہ اکھلیش کی پھر حکومت بن سکے۔
      First published: