உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    بیلٹ پیپر سے ووٹنگ ہوتی تو پارٹی اور بھی زیادہ ووٹوں سے کامیاب ہوتی: اکھلیش

    سماج وادی پارٹی کے صدر اکھلیش یادو: فائل فوٹو۔

    سماج وادی پارٹی کے صدر اکھلیش یادو: فائل فوٹو۔

    لکھنؤ۔ ضمنی الیکشن میں جیت سے پرجوش سماج وادی پارٹی کے صدر اکھلیش یادو نے کہا ہے کہ ووٹنگ ای وی ایم مشینوں کی جگہ اگر بیلٹ پیپر سے ہوتی تو پارٹی اور بھی زیادہ ووٹوں سے کامیاب ہوتی ۔

    • UNI
    • Last Updated :
    • Share this:

      لکھنؤ۔ ضمنی الیکشن میں جیت سے  پرجوش سماج وادی پارٹی کے صدر اکھلیش یادو نے کہا ہے کہ ووٹنگ ای وی ایم مشینوں کی جگہ اگر بیلٹ پیپر سے ہوتی تو پارٹی اور بھی زیادہ ووٹوں سے کامیاب ہوتی ۔ اکھلیش یادو نے آج یہاں نامہ نگاروں سے کہا کہ گورکھ پور اور پھول پور لوک سبھا سیٹ پر ہوئے ضمنی الیکشن میں اگر ای وی ایم مشین خراب نہیں ہوئے ہوتے تو سماج وادی پارٹی کو اور بھی زیادہ ووٹ ملتے ۔ انہوں نے کہا کہ بیلٹ سے ووٹ ڈالے جاتے تو سماج وادی پارٹی زیادہ ووٹوں سے کامیاب ہوتی۔


      ریاست کے سابق وزیر اعلی نے کہا کہ گورکھ پور میں ای وی ایم پہلے سے خراب تھے۔ کئی مشینوں میں پہلے سے ہی ووٹ پڑے ہوئے تھے۔ یہ تمام چیزیں الیکشن کمیشن کو دیکھنی چاہئے ۔ ای وی ایم خراب کیوں ہوئی اور انہیں عین موقع پر مرمت کیوں کرائی گئی۔


      انہوں نے کہا کہ کئی بوتھوں پر لوگ ای وی ایم مشین ٹھیک ہونے کا انتظار کرتے رہے جس سے سماج وادی پارٹی کو ووٹ کم ملے۔

      First published: