உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    شیلا دکشت کی قیادت میں دہلی کانگریس کی مختلف کمیٹیوں کا اعلان، مسلم رہنماوں کو ملی مناسب نمائندگی

    فائل فوٹو

    فائل فوٹو

    ہارون یوسف، پرویزہاشمی، حسن احمد، متین احمد، شعیب اقبال اورآصف محمد خان کےعلاوہ عشرت جہاں، مہدی ماجد، علی مہدی، محمود ضیا اوریاسمین قدوائی کوبھی مختلف کمیٹیوں میں جگہ دی گئی ہے۔

    • Share this:
      نئی دہلی: لوک سبھا انتخابات سے قبل دہلی کی سابق وزیراعلیٰ شیلادکشت کو ریاستی صدر بنائے جانے کے بعد دہلی کانگریس میں جان پڑتی ہوئی نظرآرہی ہے۔ شیلادکشت اور ان کے رفقا ہارون یوسف، دیویندریادو اورراجیش للوٹھیا کےعہدہ سنبھالنے کے بعد سےکانگریس سرگرم ہوگئی ہے۔ اسی ضمن میں کانگریس اعلی کمان نےآئندہ لوک سبھا انتخابات کے پیش نظر دہلی کی تمام 7 لوک سبھا سیٹوں کے لئے آج جمعرات کے روزمنشورکمیٹی، تشہیر کمیٹی، ریاستی انتخابی کمیٹی اوردیگرکمیٹیوں کا اعلان کردیا ہے۔ 

      خاص بات یہ ہے کہ ان تمام کمیٹیوں میں اقلیتوں کا پورا خیال رکھا گیا ہے۔ خاص طورپردہلی کانگریس کے کارگزارصدرہارون یوسف کوان تمام کمیٹیوں میں بھی جگہ ملی ہے۔ اس کے علاوہ سابق ممبرپارلیمنٹ پرویز ہاشمی، سابق ممبراسمبلی حسن احمد، چودھری متین احمد، شعیب اقبال ،آصف محمد خان کےعلاوہ آل انڈیا کانگریس کمیٹی کی ممبراورسابق اردومیڈیا انچارج عشرت جہاں، دہلی پردیش اقلیتی سیل کے چیئرمین علی مہدی، مہدی ماجد، فرحان ہاشمی، محمود ضیا، یاسمین قدوائی، عبدالواحد قریشی، مہربان قریشی اورحاجی تاج محمد کے علاوہ کچھ نئے ناموں کو بھی جگہ دی گئی ہے۔ سینئرلیڈران کے علاوہ عشرت جہاں کو میڈیا کمیٹی اورانتخابی مہم کمیٹی میں بھی جگہ دینے کے ساتھ زیادہ بھروسہ جتایا گیا ہے۔

      ریاستی کانگریس کی صدر اوردہلی کی سابق وزیراعلی شیلادکشت کی قیادت میں 32رکن انتخابی کمیٹی کا اعلان کیا گیا ہے۔  تمام کمیٹیوں میں شیلا دکشت کے قربت والے لیڈران کا خیال رکھا گیا ہے۔ کمیٹی میں ایگزیکٹیو صدر ہارون یوسف، راجیش للوٹھیا، دیوندر یادو، سابق ریاستی صدراجے ماکن، جے پرکاش اگروال، سبھاش چوپڑا اوراروندر سنگھ لولی کو شامل کیا گیا ہے۔ سابق مرکزی وزیر کپل سبل، سابق رکن پارلیمنٹ کرن سنگھ اورجناردن دویدی، پرویز ہاشمی، مہابل مشرا، سندیپ دکشت اوررمیش کمار کو بھی اس کمیٹی میں جگہ دی گئی ہے۔

       سابق اسپیکریوگانند شاستری، منگت رام سنگھل اوررماکانت گوسوامی بھی کمیٹی میں شامل ہیں۔ سابق رکن اسمبلی حسن احمد، چودھری متین احمد، پرہلاد سنگھ ساہنی، مکیش شرما، جے کشن،  انل بھاردواج، ہری شنکرگپتا کےعلاوہ منیش چترتھ، میونسپل کارپوریشن میں ایوان کے لیڈر رہنے جتندرکوچر، چترسنگھ، برہم یادو، اوم پرکاش بدھوڑی، محمود ضیا اورنیتا ورما بھی اس کمیٹی میں شامل ہیں۔ میڈیا کوآرڈی نیشن کمیٹی کا صدررماکانت گوسوامی کو بنایا گیا ہے۔ اس کے کنوینرسابق ریاستی خواتین کانگریس کی صدراونیکا مہراترا اوررکن عشرت جہاں، فرحان ہاشمی اور پرویزعالم ہوں گے۔

      انتخابی مہم کمیٹی کے صدرسبھاش چوپڑا اورنائب صدرپرویزہاشمی، رکن کرن سنگھ اورجناردن دویدی ہیں۔ کوآرڈی نیشن کمیٹی کی ذمہ داری سابق ریاستی صدر  اجےماکن کوسونپی گئی ہے۔ دویندریادواس کے نائب صدراورچودھری متین احمد کو کنوینر نامزد کیا گیا ہے۔ سابق وزیرڈاکٹراے کے والیہ، راجکماچوہان، ڈاکٹرنریندرناتھ اورمنگت رام سنگھل کےعلاوہ کارپوریشن کے سابق اپوزیشن لیڈرفرہاد سوری، جاوید مرزا، یاسمین قدوائی وغیرہ رکن نامزد کئے گئے ہیں۔
      First published: