ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

سماج وادی پارٹی میں جاری رسہ کشی پر بولے امر سنگھ، ملائم کا ساتھ دیں تمام پارٹی اراکین

طویل مدت تک پارٹی سے باہر رہنے کے بعد حال میں واپسی کرنے والے امر نے کہا کہ میں پارٹی اراکین سے نیتا جی کے ساتھ کھڑے ہونے کی اپیل کرتا ہوں۔ جو کچھ ہو رہا ہے، وہ بدقسمتی کی بات ہے۔

  • Share this:
  • author image
    NEWS18-Urdu
سماج وادی پارٹی میں جاری رسہ کشی پر بولے امر سنگھ، ملائم کا ساتھ دیں تمام پارٹی اراکین
امر سنگھ اور اکھلیش کی فائل فوٹو: فوٹو کریڈٹ گیٹی امیجیز

لکھنؤ۔ سماج وادی پارٹی کے لیڈر امر سنگھ نے پارٹی میں بحران کو آج 'بدقسمت' بتایا اور وزیر اعلی اکھلیش یادو کو پارٹی سے باہر کا راستہ دکھانے والی خاندانی رسہ کشی میں پارٹی ارکان سے ملائم سنگھ یادو کی حمایت کرنے کی اپیل کی۔ طویل مدت تک پارٹی سے باہر رہنے کے بعد حال میں واپسی کرنے والے امر نے کہا کہ میں پارٹی اراکین سے نیتا جی کے ساتھ کھڑے ہونے کی اپیل کرتا ہوں۔ جو کچھ ہو رہا ہے، وہ بدقسمتی کی بات ہے۔


ایس پی سپریمو ملائم سنگھ کی طرف سے اپنے بیٹے اکھلیش یادو اور جنرل سکریٹری رام گوپال یادو کو پارٹی سے چھ سال کے لئے نکالنے کے بعد پارٹی میں بحران کو لے کر امر سے سوال کیا گیا تھا۔ اکھلیش اور رام گوپال کو پارٹی سے اس لئے نکالا گیا کیونکہ انہوں نے پارٹی کے رسمی امیدواروں کے خلاف اپنے امیدواروں کی فہرست جاری کی اور اتوار کو پارٹی کی ایک میٹنگ بلائی ہے۔


امر نے کہا کہ پارٹی کی بنیاد ملائم سنگھ نے بہت ہی خلوص اور سخت محنت سے ڈالی تھی۔ میں نے یہ پہلے بھی کہا ہے اور اب بھی کہوں گا کہ ملائم سنگھ سماج وادی پارٹی کے صدر ہیں، ساتھ ہی میں اکھلیش کے والد بھی ہیں۔ ملائم نے جمعہ کو کہا تھا کہ انہوں نے پارٹی کو بچانے کے لئے اکھلیش اور رام گوپال کے خلاف کارروائی کی ہے۔ پارٹی کو سخت محنت  کے ذریعے کھڑا کیا گیا ہے۔


انہوں نے کہا تھا کہ ہمیں پارٹی بچانا ہے۔ پارٹی پہلے ہے۔ لہذا ہم اکھلیش اور رام گوپال دونوں کو نکال رہے ہیں۔ انہوں نے بتایا کہ یہ فیصلہ اس لئے کیا گیا کیونکہ رام گوپال نے سیکرٹری جنرل کے طور پر اپنی طاقت کا استعمال کرتے ہوئے یکم جنوری کو پارٹی کی ہنگامی میٹنگ بلانے کا فیصلہ کیا اور اکھلیش نے میٹنگ کی حمایت کی تھی۔
First published: Dec 31, 2016 11:26 AM IST