ہوم » نیوز » No Category

بھوپال انکاونٹر پر مسلم سیاستدانوں اور مسلم تنظیموں کی خاموشی افسوسناک: عمیق جامعی

عمیق جامعی نے کہا کہ بھوپال جیل سے مبینہ طور پرنکلے آٹھ زیر سماعت قیدیوں کے قتل سے صاف ہو گیا ہے کہ بہت کچھ ایسا ہے جسے چھپایا جا رہا ہے۔

  • Pradesh18
  • Last Updated: Nov 16, 2016 04:08 PM IST
  • Share this:
  • author image
    NEWS18-Urdu
بھوپال انکاونٹر پر مسلم سیاستدانوں اور مسلم تنظیموں کی خاموشی افسوسناک: عمیق جامعی
عمیق جامعی نے کہا کہ بھوپال جیل سے مبینہ طور پرنکلے آٹھ زیر سماعت قیدیوں کے قتل سے صاف ہو گیا ہے کہ بہت کچھ ایسا ہے جسے چھپایا جا رہا ہے۔

نئی دہلی۔ آل انڈیا تنظیم انصاف کے صوبائی جنرل سیکرٹری اور نوجوانوں کی آوازعمیق جامعی نے بھوپال میں سیمی کے آٹھ نوجوانوں کے انکاونٹر کے بعد مسلم سياستدانوں اور مسلم تنظیموں کی خاموشی پر سوال کھڑے کئے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ آخر ایسا کیا ہوا ہے کہ مسلم تنظیموں اور مسلم سیاستدانوں نے توغیر ضروری مسائل میں انہیں الجھا رکھا ہے جس کا معاشرے سے کوئی لینا دینا نہیں ہے، لیکن بھوپال انکاونٹر پر وہ بالکل خاموش ہیں۔ انہوں نے کہا کہ بھوپال قتل پر ان کی مصلحت پسند خاموشی پر پورے مسلم سماج کو چوٹ پہنچی ہے۔


عمیق جامعی نے کہا کہ بھوپال جیل سے مبینہ طور پرنکلے آٹھ زیر سماعت قیدیوں کے قتل سے صاف ہو گیا ہے کہ بہت کچھ ایسا ہے جسے چھپایا جا رہا ہے۔ پولیس کے ذریعہ بتایا گیا کہ جیل سے 8 قیدی فرار ہو گئے اور انہوں نے پولیس کے ایک جوان کا قتل کر دیا ہے، اس کے عوض میں انہیں پکڑ کر مار گرایا گیا۔ انہوں نے کہا کہ معصوم مسلمانوں کا انکاؤنٹر جس نے مودی جی کے گجرات ماڈل میں جنم لیا پورے ملک میں اس ماڈل نے اپنے پیر پسارے ہیں اور بھوپال قتل اسی ماڈل کی ایک توسیع ہے۔

First published: Nov 16, 2016 04:08 PM IST