உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    Census: امیت شاہ نےمردم شماری کےڈیجیٹلائزیشن کاکیااعلان، پیدائش وموت کی تفصیلات کوکیاجائےگالنک

    امت شاہ نے سنٹرل ورکشاپ اینڈ اسٹورس کا بھی سنگ بنیاد رکھا

    امت شاہ نے سنٹرل ورکشاپ اینڈ اسٹورس کا بھی سنگ بنیاد رکھا

    امت شاہ نے کہا کہ پیدائش کے بعد تفصیلات مردم شماری کے رجسٹر میں شامل کی جائیں گی اور جب وہ 18 سال کا ہو جائے گا، نام ووٹر لسٹ میں شامل ہو جائے گا اور مرنے کے بعد نام کو حذف کر دیا جائے گا۔ نام/پتے کی تبدیلی آسان ہو جائے گی۔ یوں سبھی کو جوڑ دیا جائے۔

    • Share this:
      مرکزی وزیر داخلہ امت شاہ (Union Home Minister Amit Shah) نے کہا کہ مردم شماری کے عمل کو ڈیجیٹلائز کرنے کے ساتھ اگلی گنتی کی مشق میں 100 فیصد گنتی کی توقع کی جا سکتی ہے۔ جو عالمی وبا کورونا وائرس (Covid-19) کی وجہ سے تاخیر کا شکار ہوئی ہے۔ انہوں نے کہا کہ پیدائش اور موت کے رجسٹر کو بھی مردم شماری سے منسلک کیا جائے گا۔

      اس کا مطلب ہے کہ ملک میں ہر پیدائش اور موت کے بعد مردم شماری خود بخود اپ ڈیٹ ہو جائے گی۔ وزارت داخلہ نے مردم شماری کے عمل کو مزید سائنسی بنانے کے لیے جدید تکنیکوں کو شامل کرنے کا بھی فیصلہ کیا ہے۔ ڈائریکٹوریٹ آف سینسس آپریشنز (آسام) کے دفتر کی عمارت کا افتتاح کرنے کے بعد خطاب کرتے ہوئے امت شاہ نے ملک کی ترقی کی بہتر منصوبہ بندی کے لیے مناسب گنتی کی اہمیت پر زور دیا۔

      انہوں نے کہا کہ اگلی مردم شماری ای مردم شماری (e-census) ہوگی، جو کہ 100 فیصد کامل مردم شماری ہوگی۔ اس کی بنیاد پر اگلے 25 سال کے لیے ملک کی ترقی کی منصوبہ بندی کی جائے گی۔ مردم شماری مختلف پہلوؤں سے اہم ہے۔ آسام جیسی ریاست کے لیے جو آبادی کے لحاظ سے حساس ہے، یہ اور بھی اہم ہے۔

      امت شاہ نے کہا کہ پیدائش کے بعد تفصیلات مردم شماری کے رجسٹر میں شامل کی جائیں گی اور جب وہ 18 سال کا ہو جائے گا، نام ووٹر لسٹ میں شامل ہو جائے گا اور مرنے کے بعد نام کو حذف کر دیا جائے گا۔ نام/پتے کی تبدیلی آسان ہو جائے گی۔ یوں سبھی کو جوڑ دیا جائے۔

      مزید پڑھیں: Mathura Shahi Idgah: شاہی عیدگاہ مسجد کاسروے، متھراکورٹ کی کمشنر مقررکرنےکی درخواست

      انہوں نے مزید کہا کہ پیدائش اور موت کے رجسٹر کو مردم شماری سے منسلک کیا جائے گا۔ 2024 تک ہر پیدائش اور موت کا اندراج کیا جائے گا، جس کا مطلب ہے کہ ہماری مردم شماری خود بخود اپ ڈیٹ ہو جائے گی۔ وزیر داخلہ نے آسام کے دورے کے دوران منکاچار سیکٹر میں ہندوستان-بنگلہ دیش سرحدی (India-Bangladesh border) صورتحال کا بھی جائزہ لیا۔

      مزید پڑھیں: سری لنکا کے PM مہندا راج پکشے کا استعفی، ملک بھر میں کرفیو، پرتشدد جھڑپ میں ایک ممبر پارلیمنٹ کی موت

      امت شاہ نے سنٹرل ورکشاپ اینڈ اسٹورس کا بھی سنگ بنیاد رکھا، جو ملک میں اپنی نوعیت کا دوسرا ہے۔ یہ شمال مشرق اور مغربی بنگال کے کچھ حصوں میں مرکزی مسلح نیم فوجی دستوں کو اسلحہ اور گولہ بارود فراہم کرے گا۔
      Published by:Mohammad Rahman Pasha
      First published: