உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    دو سال بعد جیل سے رہا ہوئے Azam Khan، اکھلیش نے کیا پرتپاک استقبال، بولے! جھوٹ کے لمحات ہوتے ہیں صدیاں نہیں

    Youtube Video

    Azam Khan Release: اکھلیش نے لکھا، ''سینئر ایس پی لیڈر اور ایم ایل اے اعظم خان جی کا ضمانت پر رہائی پر ان کا پرتپاک استقبال ہے۔ ضمانت کے اس فیصلے سے سپریم کورٹ نے انصاف کو نیا معیار دے دیا ہے۔ پوری امید ہے کہ وہ باقی تمام جھوٹے مقدمات اور مقدمات سے بری ہو ں گے۔ جھوٹ کے لمحات ہوتے ہیں صدیاں نہیں۔

    • Share this:
      Azam Khan Release: ایس پی لیڈر اعظم خان کو سپریم کورٹ سے عبوری ضمانت  (intrim bail to azam khan) ملنے کے بعد 27 ماہ بعد جیل سے رہا ہوگئے ہیں۔ ان کے دونوں بیٹوں عبداللہ اور ادیب اعظم کے ساتھ شیو پال یادو بھی ان کا استقبال کرنے سیتا پور جیل پہنچے۔ تمام کاغذی کارروائی کے بعد اعظم خان کو رہا کر دیا گیا اور وہ اپنے بیٹوں کے ساتھ جیل سے نکل گئے۔

      سابق ایس پی ایم ایل اے کے گھر میں حامیوں کا ہجوم

      جیل سے رہائی کے بعد ایس پی لیڈر اعظم خان سب سے پہلے سابق ایس پی ایم ایل اے انوپ گپتا کے گھر پہنچے۔ یہاں حامیوں کی بھیڑ نے انہیں گھیر لیا۔ اعظم خان کی آمد سے پہلے ہی حامیوں کا ایک بڑا ہجوم وہاں موجود تھا۔ ان کے حامی اعظم خان زندہ باد اور اعظم تم سنگھرش کرو ہم تمہارے ساتھ ہیں کے نعرے لگاتے نظر آئے۔ تقریباً آدھا گھنٹہ قیام کرنے کے بعد اعظم خان یہاں سے روانہ ہوگئے۔ ہجوم کی وجہ سے انہیں اپنی گاڑی تک پہنچنے میں بھی کافی جدوجہد کرنی پڑی۔ اس دوران میڈیا نے ان سے دوبارہ بات کرنے کی کوشش کی لیکن انہوں نے کچھ نہیں کہا۔


      اعظم کی رہائی پر اکھلیش کا ٹویٹ
      اعظم کی رہائی پر اکھلیش یادو (Akhilesh Yadav) کی طرف سے کوئی ردعمل نہ آنے پر بہت سی قیاس آرائیاں کی جا رہی تھیں، تاہم ان سب کو ختم کرتے ہوئے ایس پی سربراہ نے ٹویٹ کر اعظم خان کا خیر مقدم کیا ہے۔ اکھلیش نے لکھا، ''سینئر ایس پی لیڈر اور ایم ایل اے اعظم خان جی کا ضمانت پر رہائی پر ان کا پرتپاک استقبال ہے۔ ضمانت کے اس فیصلے سے سپریم کورٹ نے انصاف کو نیا معیار دے دیا ہے۔ پوری امید ہے کہ وہ باقی تمام جھوٹے مقدمات اور مقدمات سے بری ہو ں گے۔ جھوٹ کے لمحات ہوتے ہیں صدیاں نہیں!

      یہ بھی پڑھیں: SP Veteran Azam Khan کو سپریم کورٹ سے  ملی عبوری ضمانت، آج ہو گی رہائی؟


      عبداللہ اعظم نے کہا کہ ہمیں انصاف ملا
      سیتا پور پہنچنے کے بعد عبداللہ اعظم نے صحافیوں سے بات کرتے ہوئے کہا کہ سپریم کورٹ نے ہمیں انصاف دیا ہے۔ وہ اپنے بھائی ادیب اعظم کے ساتھ والد اعظم خان کو لینے سیتا پور پہنچے  ہیں۔

      یہ بھی پڑھئے: Shahi Eidgah Case: متھراضلعی عدالت نے ہندو فریق کی درخواست کی قبول ، اب ہوگی سماعت

      جیل کی سیکیورٹی سخت ۔
      رام پور کے کوتوالی پولیس اسٹیشن سے متعلق ایک معاملے میں ایس پی لیڈر اعظم خان کی رہائی سے قبل پولیس نے سیتاپور ضلع جیل کے باہر چوکسی سخت کردی ہے۔ سپریم کورٹ کے فیصلے کے حوالے سے اعظم کے بیٹے ادیب نے کہا کہ سپریم کورٹ کے فیصلے سے بہت خوش ہوں۔ رہائی کے بعد ہم سیدھے رام پور جائیں گے۔ بتایا جاتا ہے کہ اعظم کی رہائی کے پیش نظر ایس پی ایم ایل اے آشو ملک سیتا پور جیل پہنچ گئے ہیں۔

      مزید پڑھئے: ٹیرر فنڈنگ کیس میں Yasin Malik قصوروار قرار، NIA کی خصوصی عدالت نے سنایا بڑا فیصلہ

      اعظم خان 28 ماہ سے جیل میں تھے۔
      ایس پی لیڈر اعظم خان تقریباً 28 ماہ سے ڈسٹرکٹ جیل میں بند تھے۔ ان کے ساتھ ان کی اہلیہ تنظیم فاطمہ اور بیٹا عبداللہ اعظم بھی جیل میں نظر بند تھے۔ بیوی اور بیٹا پہلے ہی ضمانت پر رہا ہو چکے ہیں۔ اعظم خان کے خلاف 85 سے زائد مقدمات درج ہیں۔ انہیں ابھی ایک کیس میں ضمانت ملنی باقی تھی۔
      Published by:Sana Naeem
      First published: