ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

پرینکا کے آنے سے نرم پڑے ایس پی۔ بی ایس پی کے تیور، کانگریس کو کی 14 سیٹوں کی پیشکش: ذرائع

ذرائع سے ملی جانکاری کے مطابق، ایس پی اور بی ایس پی نے کانگریس سے اتحاد پر ازسر نو غور کرنا شروع کر دیا ہے۔

  • Share this:
پرینکا کے آنے سے نرم پڑے ایس پی۔ بی ایس پی کے تیور، کانگریس کو کی 14 سیٹوں کی پیشکش: ذرائع
سونیا گاندھی، راہل گاندھی اور مایاوتی: فائل فوٹو۔

پرینکا گاندھی کے سرگرم سیاست میں آنے کے بعد اترپردیش میں ایک نیا موڑ دیکھنے کو مل رہا ہے۔ ذرائع سے ملی جانکاری کے مطابق، ایس پی اور بی ایس پی نے کانگریس سے اتحاد پر ازسر نو غور کرنا شروع کر دیا ہے۔ بتایا جا رہا ہے کہ کانگریس کو 14 سیٹوں کا آفر بھی دے دیا گیا ہے۔ دوسری طرف کانگریس سے منسلک ذرائع کا کہنا ہے کہ پارٹی کو ایس پی۔ بی ایس پی سے کم ازکم 30 سیٹیں ملنے کی امید ہے۔


بتا دیں کہ مایاوتی اور اکھلیش یادو نے 12 جنوری کو آئندہ لوک سبھا انتخابات کے لئے بہوجن سماج پارٹی اور سماج وادی پارٹی کے درمیان اتحاد کا اعلان کیا تھا۔ دونوں پارٹیوں نے یوپی کی 80 لوک سبھا سیٹوں میں سے 38-38 سیٹوں پر الیکشن لڑنے کا اعلان کیا تھا۔ دو سیٹیں دیگر حلیف پارٹیوں اور امیٹھی۔ رائے بریلی کی سیٹیں کانگریس کے لئے چھوڑ دی تھیں۔


کانگریس کے لئے دو سیٹیں چھوڑنے کے اعلان کے ساتھ ہی دونوں نے یہ بھی واضح کر دیا تھا کہ وہ کانگریس کے ساتھ کوئی اتحاد نہیں کریں گی۔


بتا دیں کہ نو منتخب کانگریس جنرل سکریٹری پرینکا گاندھی آج لکھنئو پہنچ رہی ہیں۔ پرینکا کی لکھنئو آمد پر کانگریسیوں میں غضب کا جوش دیکھنے کو مل رہا ہے۔ اموسی ائیرپورٹ سے کانگریس دفتر تک پرینکا گاندھی کا 25 کلومیٹر طویل روڈ شو ہو گا۔ اس دوران 28 مقامات پر کانگریسی پرینکا گاندھی کا خیرمقدم کریں گے۔ ساتھ پی پرینکا گاندھی لال باغ میں ایک عوامی اجلاس سے خطاب بھی کریں گی۔ پرینکا کے ساتھ مغربی یوپی کے جنرل سکریٹری جیوترادتیہ سندھیا اور صدر راہل گاندھی بھی روڈ شو میں موجود رہیں گے۔
First published: Feb 11, 2019 09:41 AM IST