உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    اجودھیا میں بجرنگ دل کے شوریہ کیمپ میں نفرت کی ٹریننگ، سامنے آئیں تصویریں

    ایودھیا۔ یوپی کے ایودھیا میں منعقد بجرنگ دل کے سالانہ شوریہ تربیتی کیمپ کی تصاویر سامنے آنے سے تنازعہ کھڑا ہو گیا ہے۔

    ایودھیا۔ یوپی کے ایودھیا میں منعقد بجرنگ دل کے سالانہ شوریہ تربیتی کیمپ کی تصاویر سامنے آنے سے تنازعہ کھڑا ہو گیا ہے۔

    • Share this:
      ایودھیا۔ یوپی کے ایودھیا میں منعقد بجرنگ دل کے سالانہ شوریہ تربیتی کیمپ کی تصاویر سامنے آنے سے تنازعہ کھڑا ہو گیا ہے۔ ٹریننگ کیمپ میں یہ تنظیم اپنے کارکنوں کو رائفل اور تلوار چلانا سکھا رہی ہے۔ خاص بات یہ ہے کہ رائفل اور تلوار چلانے کی ٹریننگ کے لئے ڈمی کے طور پر جن لوگوں کو نشانے پر لیا جا رہا ہے، انہیں داڑھی اور مسلم ٹوپی پہنائی گئی ہے۔

      بجرنگ دل نے جہاں اس طرح کے کیمپ کو اپنا معمول کا نظم بتایا ہے وہیں حزب اختلاف کی جماعت اس میں اسمبلی انتخابات سے ٹھیک پہلے یوپی کی فضا خراب کرنے کی بی جے پی کی سازش سے تعبیر کر رہی ہے۔ کیمپ کے آرگنائزر منوج ورما نے کہا کہ یہ بجرنگ دل کا سالانہ پروگرام ہے تاکہ کارکن معاشرے اور قوم کے لئے خود کو وقف کر سکیں۔

      انہوں نے کہا کہ یہ اعتماد کی ٹریننگ ہے۔ مشکل حالات میں کس طرح کام کرنا ہے یہ سکھایا جا رہا ہے تاکہ ہم حالات سے بھاگیں نہیں۔ انہوں نے کہا کہ ہم فوجی نہیں ہیں۔ اپنے دفاع کے لئے عام شہری کو جس طرح کرنا چاہئے، اس کے لئے یہ ٹریننگ ہے۔

      کانگریس کے ترجمان شوبھا اوجھا نے اس خبر پر کہا کہ یہ بہت ہی بدقسمتی کی بات ہے کہ بی جے پی جب جب انتخابات آتے ہیں تو ریاستوں میں ایسے کام کرتی ہے۔ حکومت کو ایسی ٹریننگ پر پابندی لگانی چاہئے۔ ریاستی حکومت کو بھی جاگنا ہوگا اور ایسی تنظیموں پر لگام كسنی ہوگی۔

      2

      سی پی آئی لیڈر عمیق جامعی نے فیس بک پر لکھا کہ بابری مسجد کے نزدیک بجرنگ دل کی سالانہ ٹریننگ اگلے اسمبلی کے لئے ماحول پیدا کرنے کے لئے ہے۔ پولیس کو اس سے سختی سے نمٹنا چاہئے۔ مرکزی حکومت کو بھی ایسی آرمس ریہرسل پر موقف صاف کرنا چاہئے۔ مجھے بتایا گیا ہے کہ ٹریننگ میں دشمن داڑھی اور ٹوپی میں ہیں تو وہ کون لوگ ہیں مودی جی؟

       
      First published: