ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

سیاسی دباؤ میں کبھی کام نہیں کیا ، دہلی پولیس کیلئے خودمختاری سب سے اہم : بی ایس بسی

نئی دہلی: مسٹر آلوک کمار کو دہلی کا نیا پولیس کمشنر بنایا گیا ہے۔وہ 1979بیچ کے آئی پی ایس افسر ہیں۔ رخصت پذیر کمشنر بی ایس بسی کی تین سالہ میعاد دہلی کی عام آدمی پارٹی کے ساتھ مسلسل ٹکراؤ میں گزری۔ اپنی الوداعی تقریب میں صحافیوں سے خطاب کرتے ہوئے مسٹر بسی نے کہا کہ دہلی پولیس نے کسی سیاسی دباؤ میں کبھی کام نہیں کیا اور دہلی پولیس کے لئے اس کی خودمختاری سب سے اہم ہے۔

  • UNI
  • Last Updated: Feb 29, 2016 04:54 PM IST
  • Share this:
  • author image
    NEWS18-Urdu
سیاسی دباؤ میں کبھی کام نہیں کیا ، دہلی پولیس کیلئے خودمختاری سب سے اہم : بی ایس بسی
نئی دہلی: مسٹر آلوک کمار کو دہلی کا نیا پولیس کمشنر بنایا گیا ہے۔وہ 1979بیچ کے آئی پی ایس افسر ہیں۔ رخصت پذیر کمشنر بی ایس بسی کی تین سالہ میعاد دہلی کی عام آدمی پارٹی کے ساتھ مسلسل ٹکراؤ میں گزری۔ اپنی الوداعی تقریب میں صحافیوں سے خطاب کرتے ہوئے مسٹر بسی نے کہا کہ دہلی پولیس نے کسی سیاسی دباؤ میں کبھی کام نہیں کیا اور دہلی پولیس کے لئے اس کی خودمختاری سب سے اہم ہے۔

نئی دہلی: مسٹر آلوک کمار کو دہلی کا نیا پولیس کمشنر بنایا گیا ہے۔وہ 1979بیچ کے آئی پی ایس افسر ہیں۔ رخصت پذیر کمشنر بی ایس بسی کی تین سالہ میعاد دہلی کی عام آدمی پارٹی کے ساتھ مسلسل ٹکراؤ میں گزری۔ اپنی الوداعی تقریب میں صحافیوں سے خطاب کرتے ہوئے مسٹر بسی نے کہا کہ دہلی پولیس نے کسی سیاسی دباؤ میں کبھی کام نہیں کیا اور دہلی پولیس کے لئے اس کی خودمختاری سب سے اہم ہے۔

انھوں نے کہا کہ کچھ لوگ سمجھتے ہیں کہ پولیس سیاسی دباؤ میں کام کرتی ہے ، برائے مہربانی اس خیال کو ذہن سے نکال دیجئے۔ تاہم مسٹر بسی نے اعتماد ظاہر کیا کہ انکے جانشین آلوک ورما دہلی پولیس میں ٹکنا لوجی کو نئی بلندیوں تک لے جائیں گے۔

مسٹر بسی نے دہلی پولیس کی پوری ٹیم کو مکمل تعاون کے لئے شکریہ ادا کیا اور انکی کا میابی کی تمنا کی ۔انھوں مزید کہا کہ دہلی پولیس ایک عظیم فورس ہے ، میرے 80ہزار سے زائد جواں کی حمایت ہی میری سب سے بڑی طاقت رہی ہے۔ انھوں نے میرے اوپر کبھی کام کا دباؤ پڑنے نہیں دیا۔

مسٹر بسی کے لئے آخری کچھ ہفتے متنازعہ رہے ہیں جن پر جے این یو معاملے سے غلط طریقے سے نمٹنے کا الزام ہے۔ گزشتہ کچھ ہفتوں میں دہلی پولیس پر جواہر لعل نہرو یونیورسٹی کے طلبا کے خلاف طاقت کے بیجا استعمال کا الزام لگتا رہا ہے۔9 فروری کو پارلیمنٹ حملے کے قصور وار افضل گرو کی برسی پر جے این یو کیمپس میں ایک پروگرام منعقد کیا گیا تھا جس کے خلاف پولیس نے کارروائی کی تھی۔ ابھی تک تین طلبا کو غداری کے الزام میں گرفتار کیا گیا ہے۔

First published: Feb 29, 2016 04:54 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading