ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

رام مندر کی تعمیر کے لئے پارلیمنٹ کے مشترکہ اجلاس میں بنایا جائے قانون: رام ولاس ویدانتی

الہ آباد : سپریم کورٹ کے فیصلے سے قبل ہی ایو دھیا میں رام مندر کی تعمیر کے لئے وشو ہندو پریشد نے مرکزی حکومت پر دباؤ بنانا شروع کر دیا ہے۔ وی ایچ پی نے مرکزی حکومت سے مطالبہ کیا ہے کہ وہ پارلیمنٹ کا مشترکہ اجلاس طلب کرکے رام مندر کی تعمیر سے متعلق قانون پاس کرے ۔

  • ETV
  • Last Updated: Feb 06, 2016 08:05 PM IST
  • Share this:
  • author image
    NEWS18-Urdu
رام مندر کی تعمیر کے لئے پارلیمنٹ کے مشترکہ اجلاس میں بنایا جائے قانون: رام ولاس ویدانتی
رام جنم بھومی ٹرسٹ کے سینئر رام ولاس ویدانتی

الہ آباد : سپریم کورٹ کے فیصلے سے قبل ہی ایو دھیا میں رام مندر کی تعمیر کے لئے وشو ہندو پریشد نے مرکزی حکومت پر دباؤ بنانا شروع کر دیا ہے۔ وی ایچ پی نے مرکزی حکومت سے مطالبہ کیا ہے کہ وہ پارلیمنٹ کا مشترکہ اجلاس طلب کرکے رام مندر کی تعمیر سے متعلق قانون پاس کرے ۔


الہ آباد میں منعقد ہونے والے وی ایچ پی کے تین روزہ مارگ درشک منڈل کی میٹنگ میں رام مندر کی تعمیر سے متعلق سخت موقف اختیار کیا گیا۔ میٹنگ کی صدارت مارگ درشک منڈل کے سر براہ رام ولاس ویدانتی نے کی ۔


میٹنگ کے بعد میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے رام ولاس ویدانتی نے کہا کہ مندر کی تعمیر کے لئے حکومت راجیہ سبھا اور لوک سبھا کا مشترکہ اجلاس بلائے ، مندر بنانے کا قانون پاس کرے ۔انہوں نے کہا کہ ہندو راشٹر کا اعلان کرنا ، وی ایچ پی کا اولین مقصد ہے ۔


خیال رہے کہ اس سے قبل بی جے پی لیڈر سبرامنیم سوامی بھی دعوی کرچکے ہیں کہ عدالت کا فیصلہ رام مندر کے ہی حق میں آئےگا ۔

First published: Feb 06, 2016 08:05 PM IST