ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

ٹریڈ یونینوں کی 2 روزہ ہڑتال آج سے، ملک گیر سطح پر حکومت کے خلاف ہو رہا احتجاج

لوک سبھا انتخابات سے قبل ملک گیر سطح پر اس طرح کا احتجا ج سرکار کے لئے درد سر ثابت ہوسکتا ہے

  • Share this:
ٹریڈ یونینوں کی 2 روزہ ہڑتال آج سے، ملک گیر سطح پر حکومت کے خلاف ہو رہا احتجاج
اس ہڑتال میں دس ٹریڈ یونین شامل ہیں

آج سے ملک گیر سطح پر ٹریڈ یونینوں نے دو روزہ ہڑتال کی کال دی ہے۔ اس ہڑتال میں تقریبا 20 کروڑ ملازمین شامل ہیں۔ اس کے ساتھ ہی ممبئی میں بیسٹ بس یونین نے ہڑتال کا اعلان کیا ہے۔ اس کے مد نظر ممبئی میں ہر روز چلنے والی 1812 بسوں میں سے صبح ایک بھی بس نہیں چلی ہے۔ بیسٹ مینجمنٹ نے ہڑتال پر روک لگانے کے لئے میسما لگا دیا ہے۔


 ملک گیر سطح پر مرکزی حکومت کے خلاف کسان بھی احتجا ج کر رہے ہیں۔ کسان قرض معافی کے وعدے کو اب تک پورا نہیں کئے جانے سے ناراض ہیں۔ اس ہڑتال میں دس ٹریڈ یونین شامل ہیں۔ آئی این ٹی یو سی نے ہڑتال کی حمایت کرنے کا اعلان کیا ہے ۔ لوک سبھا انتخابات سے قبل ملک گیر سطح پر اس طرح کا احتجا ج سرکار کے لئے درد سر ثابت ہوسکتا ہے۔


مرکزی حکومت کی مزدور مخالف، عوام مخالف اور ملک مخالف پالیسیوں کے خلاف دس مرکزی مزدور تنظیموں کے اعلان پر آج منعقد ہڑتال کا اثر ملک بھر میں دیکھا گیا اور صنعتی علاقوں میں کام کاج نہیں ہوا جبکہ بینکنگ، انشورنس، کانکنی ، بجلی، تعلیم، نقل و حمل اور صحت خدمات متاثر رہیں۔ ابتدائی اطلاعات کے مطابق ملک بھر میں بینکنگ، انشورنس، کوئلہ اور دیگر کانکنی، پٹرولیم، ڈاک، ٹیلی کمیونکیشن، انجینئرنگ، مینوفیکچرنگ، اسٹیل، ہیلتھ، سیکورٹی، ایجوکیشن ، واٹر سپلائی، روڈ ٹرانسپورٹ، مرکز اور ریاستی حکومت کے ملازمین اور آٹو- ٹیکسی سے منسلک سیکٹروں میں ہڑتال کا اثر رہا ہے۔


دس مرکزی مزدور یونین کے اعلان پر منعقد دو روزہ ہڑتال کا آج پہلا دن ہے۔ اس ہڑتال میں آئی این ٹی یو سی ، اےآئی ٹی یو سی ، ایچ ایم سی ، سي آئی ٹي يو، اےآئی یو ٹی یوسی ، ٹي يوسي سي، ایس ای ڈبلیو اے، اےآ ئی سی سی ٹی یو ، ایل پی ایف اور يوٹي يوسي سے منسلک تنظیمیں شامل ہیں۔ مزدور تنظیموں نے آٹھ اور نو جنوری کو ملک بھر میں ہڑتال کا اعلان کیا ہے۔

نیوز ایجنسی یو این آئی، اردو کے ان پٹ کے ساتھ


 
First published: Jan 08, 2019 10:36 AM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading