உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    فوجی جوانوں کو فیس بک۔انسٹاگرام سمیت 89 ایپ ڈلیٹ کرنے کا حکم، نہیں کیا تو ہوگی کارروائی

    ہندستانی فوج (Indian Army) کے افسران  (Officers) اور فوجیوں (Soldiers) کو فیس بک۔انسٹاگرام اکاؤنٹ ڈلیٹ (Facebook-Instagram Account Delete) کرنے کے احکام دئے گئے ہیں۔ ساتھ ہی 89 دیگر ایپ کی بھی لسٹ جاری کی گئی ہے جنہیں موبائل سے ان انسٹال  (Uninstall) کئے جانا کا حکم ہے۔

    ہندستانی فوج (Indian Army) کے افسران (Officers) اور فوجیوں (Soldiers) کو فیس بک۔انسٹاگرام اکاؤنٹ ڈلیٹ (Facebook-Instagram Account Delete) کرنے کے احکام دئے گئے ہیں۔ ساتھ ہی 89 دیگر ایپ کی بھی لسٹ جاری کی گئی ہے جنہیں موبائل سے ان انسٹال (Uninstall) کئے جانا کا حکم ہے۔

    ہندستانی فوج (Indian Army) کے افسران (Officers) اور فوجیوں (Soldiers) کو فیس بک۔انسٹاگرام اکاؤنٹ ڈلیٹ (Facebook-Instagram Account Delete) کرنے کے احکام دئے گئے ہیں۔ ساتھ ہی 89 دیگر ایپ کی بھی لسٹ جاری کی گئی ہے جنہیں موبائل سے ان انسٹال (Uninstall) کئے جانا کا حکم ہے۔

    • Share this:
      ہندستانی فوج (Indian Army) کے افسران  (Officers) اور فوجیوں (Soldiers) کو فیس بک۔انسٹاگرام اکاؤنٹ ڈلیٹ (Facebook-Instagram Account Delete) کرنے کے احکام دئے گئے ہیں۔ ساتھ ہی 89 دیگر ایپ کی بھی لسٹ جاری کی گئی ہے جنہیں موبائل سے ان انسٹال  (Uninstall) کئے جانا کا حکم ہے۔ حکم کے مطابق سبھی کو اسے 15  جولائی تک پورا کرنا ہوگا۔ یہ فیصلہ فوج کی حساس جانکاریوں کے لیک ہونے کا حوالہ دیکر لیا گیا ہے۔ فوج نے کہا ہے کہ جن کے بھی موبائل میں فیس بک ، انسٹاگرام کے علاوہ یہ 89  ایپس(89 Apps)  ملے تو کارروائی کی جائے گی۔
      ٹائمس آف انڈیا میں شائع ایک رپورٹ کے مطابق فوج کے ایک افسر نے بتایا ہے کہ یہ قدم اس لئے اٹھایا گیا ہے کیونکہ فوجی افسران اور فوجی جوانوں پر انایپس کے ذڑیعے چین اور پاکستان کے ذڑیعے آن لائن نگاہ رکھنے کے واقعات بڑھے ہیں۔ غور طلب ہے کہ گزشتہ نومبر میں فوج نے اسٹاف کو ہدایت دی تھی کہ آفیشیل کاموں کیلئے وہاٹس ایپ کا استعمال نہ کیا جائے۔ ساتھ ہی اہم عہدوں پر موجود فوجی افسران سے فیس بک سوشل میڈیا اکاؤنٹ ڈؒیٹ کرنے کو کہا گیا ہے۔


      ہنی ٹریپ کے واقعات
      گزشتہ سالوں میں ایسے کئی معاملے سامنے آئے ہیں جب پاکستانی ایجنٹس کے ذریعے خاتون  بن کر ہنی ٹریپ میں پھنساکر دیگر فوجی اسٹاف سے خفیہ جانکاریاں حاصل کی گئی ہیں۔ حالیہ حکم کے مطابق خفیہ اطلاعات کو محفوظ رکھنے کے پیش نظر بحریہ نے بھی اپنے سبھی اسٹاف کے فیس بک کے استعمال کرنے پر پابندی عائد کردی ہے۔ ساتھ ہی بحریہ بیس پر اسمارٹ فون نہ لے جانے کے بھی احکام دئے گئے ہیں۔ بحیہ میں یہ فیصلہ گزشتہ ماہ ہی لیا گیا تھا۔
      کچھ پابندیوں کے ساتھ اب تک تھی چھوٹ
      غور طلب ہے کہ اب ہندستانی فوج نے اپنے اسٹاف کو کچھ پاندیوں کے ساتھ فیس بک کے استعمال کی چھوٹ دے رکھی تھی۔ یونیفارم میں تصویر نہ پوسٹ کرنے سمیت اپنی یونٹ کی لوکیشن نہ ڈسکلوز کرنے جیسی پابندیاں تھیں۔

      ٹائمس آف انڈیا کی ایک رپورٹ کے مطابو خفیہ جانکاری اور حساس پوسٹ کرنے کے سبب فوج  میں کئی افسران کا کورٹ مارشل تک کیا جاچکا ہے۔
      Published by:Sana Naeem
      First published: