உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    !ہندستانی گھٹائیں گے 'کنگال پاکستان' کا قرض، اس سمجھوتے سے پاک کی ہوگی سالانہ 555 کروڑ روپئے کی کمائی

    پاکستان کے وزیر اعظم عمران خان کے ساتھ پی ایم مودی کی فائل فوٹو۔

    پاکستان کے وزیر اعظم عمران خان کے ساتھ پی ایم مودی کی فائل فوٹو۔

    اس معاہدے کے تحت پاکستان تمام مسافروں سے 20 سروس چارج وصول کرے گا اور ایک دن میں 5 ہزار زائرین بغیر ویزا کے پہنچ سکتے ہیں۔ اس سے روزانہ پاکستان کی کمائی 1 لاکھ ڈالر ہوگی۔

    • Share this:
      نئی دہلی: کرتارپور کوریڈور کیلئے ہندستان اور پاکستان کے درمیان کرتارپور کوریڈور کو لیکر ایک سمجھوتے پر دستخط کیا گیا ہے۔ اس معاہدے کے تحت ہندوستان کے عقیدت مند پاکستان میں دربار صاحب کی زیارت  (درشن) کرسکتے ہیں۔ معاہدے کے ساتھ ہی پاکستان کی حالت میں سدھار ہوگا کیونکہ اس سے ہر سال پاکستان کو 555 کروڑ پاکستانی روپئےکی کمائی ہوگی۔۔
      اس معاہدے کے تحت  پاکستان تمام مسافروں سے 20 سروس چارج وصول کرے گا اور ایک دن میں 5 ہزار زائرین بغیر ویزا کے پہنچ سکتے ہیں۔ اس سے  روزانہ پاکستان کی کمائی 1 لاکھ ڈالر ہوگی۔
      پاکستانی روپئے کا ڈالر سے موازنہ کریں تو ایک ڈالر کی قیمت 155.74  روپئے ہے۔ اس حساب سے پاکستان کی روزانہ کمائی 1.55  کروڑ پاکستانی روپئے کی کمائی طے ہے۔ یہ کوریڈور سال بھر  اور ہفتے میں ساتوں دن چالو رہے  گا۔
      مطلب ، ایک سال میں اس کی آمدنی  3.65 کروڑ ڈالر  ہوگی ، جس کی قیمت پاکستانی روپئے میں قریب 555  کروڑ روپئے ہوں گے۔
      پاکستان کی معاشی حالت  ٹھیک ہونے کی امید
      پاکستان کی حالت ٹھیک نہیں ہے اس پر لاکھوں کروڑوں کا قرض ہے اور مدد کے لئے وہ آئی ایم ایف سمیت تمام اداروں کے سامنے ہاتھ پھیلا رہا ہے۔ ایسی صورتحال میں  اس معاہدے سے اسے معاشی حالت سدھارنے میں ضرور مدد ملے گی۔
      وزیر اعظم نریندر مودی اور عمران خان 9 نومبر کو افتتاح کریں گے
      اس پروگرام میں وزیر اعظم نریندر مودی اور عمران خان شامل ہوسکتے ہیں۔ اس معاہدے کے مطابق عقیدت مند صبح کے وقت یہاں پہنچیں گے اور گردوارا دربار صاحب کے درشن کرکے شام تک واپس آئیں گے۔ انہیں اپنے ساتھ پاسپورٹ لینا ہوگا لیکن ویزا کی ضرورت نہیں ہوگی۔ 9 نومبر کو کوریڈور کا افتتاح کیا جائے گا۔
      First published: