உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    مشن 2024: آج شام بی جے پی کی بڑی میٹنگ، 144 لوک سبھا سیٹوں کی رپورٹ پیش کریں گے مرکزی وزرا

    Bhartiya Janata Party: بی جے پی ذرائع کے مطابق اس میٹنگ میں پارٹی کے سینئر لیڈران آئندہ عام انتخابات کی تیاریوں اور حکمت عملی پر تبادلہ خیال کریں گے۔ مرکزی وزیر داخلہ امت شاہ، بی جے پی کے قومی صدر جے پی نڈا اور نیشنل آرگنائزیشن سکریٹری بی ایل سنتوش کے ساتھ مودی حکومت کے انچارج وزیر بھی موجود رہیں گے۔

    Bhartiya Janata Party: بی جے پی ذرائع کے مطابق اس میٹنگ میں پارٹی کے سینئر لیڈران آئندہ عام انتخابات کی تیاریوں اور حکمت عملی پر تبادلہ خیال کریں گے۔ مرکزی وزیر داخلہ امت شاہ، بی جے پی کے قومی صدر جے پی نڈا اور نیشنل آرگنائزیشن سکریٹری بی ایل سنتوش کے ساتھ مودی حکومت کے انچارج وزیر بھی موجود رہیں گے۔

    Bhartiya Janata Party: بی جے پی ذرائع کے مطابق اس میٹنگ میں پارٹی کے سینئر لیڈران آئندہ عام انتخابات کی تیاریوں اور حکمت عملی پر تبادلہ خیال کریں گے۔ مرکزی وزیر داخلہ امت شاہ، بی جے پی کے قومی صدر جے پی نڈا اور نیشنل آرگنائزیشن سکریٹری بی ایل سنتوش کے ساتھ مودی حکومت کے انچارج وزیر بھی موجود رہیں گے۔

    • News18 Urdu
    • Last Updated :
    • Delhi, India
    • Share this:
      لوک سبھا انتخابات 2024 کی تیاریوں کے سلسلے میں آج تقریباً 4:30 بجے راجدھانی میں پارٹی ہیڈکوارٹر میں بی جے پی کی ایک اہم میٹنگ ہوگی۔ بی جے پی ذرائع کے مطابق اس میٹنگ میں پارٹی کے سینئر لیڈران آئندہ عام انتخابات کی تیاریوں اور حکمت عملی پر تبادلہ خیال کریں گے۔ مرکزی وزیر داخلہ امت شاہ، بی جے پی کے قومی صدر جے پی نڈا اور نیشنل آرگنائزیشن سکریٹری بی ایل سنتوش کے ساتھ مودی حکومت کے انچارج وزیر بھی موجود رہیں گے۔

      بھارتیہ جنتا پارٹی نے 144 لوک سبھا حلقوں کو مختلف کلسٹروں میں تقسیم کیا ہے جن پر وہ اپنی گرفت مضبوط کرنا چاہتی ہے، اور ہر کلسٹر کے لیے ایک وزیر کو انچارج بنایا ہے۔ اسمرتی ایرانی، دھرمیندر پردھان، پیوش گوئل، بھوپیندر یادو، انوراگ ٹھاکر، نریندر سنگھ تومر، سنجیو بالیان اور مہندر پانڈے جیسے لیڈران مرکزی وزراء میں شامل ہیں جنہیں یہ ذمہ داری دی گئی ہے۔

      بی جے پی نے 144 لوک سبھا سیٹوں پر توجہ مرکوز کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔
      ذرائع کے مطابق منگل کی میٹنگ میں مودی حکومت کے وزراء اپنی رائے اور اپنے زیر چارج لوک سبھا حلقوں سے متعلق رپورٹ پیش کریں گے۔ بنیادی طور پر 144 لوک سبھا حلقوں کے زمینی حقائق اور جیت کے لیے اٹھائے جانے والے اقدامات پر تبادلہ خیال کیا جائے گا۔ تمام لوک سبھا کلسٹرز کے انچارجوں کو یہ رپورٹس تیار کرنے کے لیے 31 اگست تک کا وقت دیا گیا تھا۔

      اس سال 25 مئی کو، بی جے پی نے ان 144 لوک سبھا سیٹوں پر توجہ مرکوز کرنے کا فیصلہ کیا تھا، جہاں اس نے خود کو کمزور پایا اور 2019 میں شکست کا مارجن بہت کم تھا۔ اس لیے یہاں جیت کو یقینی بنانے کے لیے ضروری اقدامات کی نشاندہی کی ذمہ داری مختلف وزراء کو سونپی گئی۔ ان میں سے زیادہ تر سیٹوں پر بی جے پی 2019 کے انتخابات میں دوسرے یا تیسرے نمبر پر رہی تھی۔

      6 سال سے اپنے ہی بھائی کے ساتھ رلیشن شپ میں تھی لڑکی، جب سامنے آئی سچائی تو اڑ گئے ہوش

      کچھ برا ہونے کے ڈر سے آرہا پسینہ، کہیں Anxiety Attack تو نہیں؟ جانئے اہم معلومات

      مرکزی وزراء کو 144 لوک سبھا حلقوں میں کم از کم 48 گھنٹے گزارنے پڑے
      کئی مرکزی وزراء کو ان حلقوں میں کم از کم 48 گھنٹے گزارنے اور 'پرواس یاترا' کے ذریعے جیت کا راستہ تلاش کرنے کے لیے رپورٹیں تیار کرنے کا کام دیا گیا تھا۔ ذرائع کے مطابق مرکزی کابینہ کے تمام وزراء نے اپنے لئے الاٹ کئے گئے تقریباً تمام لوک سبھا حلقوں کا دورہ کیا اور 2024 کے انتخابات میں وہاں جیت کو یقینی بنانے کے لئے کئے جانے والے اقدامات کی نشاندہی کی۔ ذرائع کے مطابق میٹنگ میں مرکزی وزیر امت شاہ، بی جے پی صدر جے پی نڈا اور قومی تنظیم کے سکریٹری بی ایل سنتوش ان وزراء سے زمینی حقیقت کا اندازہ لیں گے اور پارٹی کے ہدف کو حاصل کرنے کے لیے مستقبل کی حکمت عملی پر تبادلہ خیال کریں گے۔
      Published by:Sana Naeem
      First published: