ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

جب روی شنکر پرساد نے کہا۔ شاہین باغ میں ملک توڑنے والے لوگ تو کیجریوال نے دیا کچھ ایسا جواب

عام آدمی پارٹی(عآپ)کے قومی کنوینر اور دہلی کے وزیر اعلی اروند کیجریوال نے منگل کو بھارتیہ جنتاپارٹی پر شاہین باغ کے سلسلے میں گندی سیاست کرنے کا الزام لگایا۔

  • UNI
  • Last Updated: Jan 27, 2020 03:41 PM IST
  • Share this:
جب روی شنکر پرساد نے کہا۔ شاہین باغ میں ملک توڑنے والے لوگ تو کیجریوال نے دیا کچھ ایسا جواب
شاہین باغ میں جاری احتجاج کا ایک منظر

نئی دہلی۔ قانون کے مرکزی وزیر روی شنکر پرساد نے شہریت ترمیمی قانون (سی اےا ے)کے خلاف شاہین باغ میں مظاہرہ کرنے والوں کی حمایت کرنے کے لئے پیر کو کانگریس اور عام آدمی پارٹی(عآپ) کو آڑے ہاتھوں لیتے ہوئے کہا کہ دہلی کے عوام کو اسمبلی انتخابات میں یہ فیصلہ کرنا ہوگا کہ وہ ووٹ بینک کی سیاست کرنے والے ’ٹکڑے ٹکڑے گینگ‘ کے ساتھ ہیں یا سبھی کو عزت اور احترام کے ساتھ رہنے کا موقع دینے والوں کو چاہتے ہیں۔


شاہین باغ میں 26 جنوری کو یوم جمہوریہ کا جشن منانے کے لئے عوام کا زبردست ہجوم امنڈ پڑا


روی شنکر پرساد نے آج بھارتیہ جنتاپارٹی (بی جے پی) کے دہلی دفتر میں پریس کانفرنس میں کہا کہ شاہین باغ اب دلی کا ایک محلہ نہیں رہ گیا ہے، یہ ایک نظریہ ہے جہاں ترنگے جھنڈے کا استعمال ایسے لوگوں کو ڈھال دینے کے لئے استعمال کیا جا رہا ہے جو ملک کو بانٹنا چاہتے ہیں۔ شاہین باغ میں سی اے اے کے خلاف بیٹھے لوگوں کو ووٹ بینک کی سیاست کے لئے’ ٹکڑے ٹکڑے‘گینگ کی حمایت کرنے والوں کے تئیں کانگریس لیڈر راہل گاندھی اور دہلی کے وزیراعلی اروند کیجریوال خاموشی اختیار کئے ہوئے ہیں لیکن نائب وزیراعلی منیش سسودیا مظاہرین کی حمایت کھل کر کر رہے ہیں۔


روی شنکر پرساد نے کہا۔ شاہین باغ میں ملک کو توڑنے والے لوگ


پریس کانفرنس میں بی جے پی کی دلی اکائی کے سابق صدر اور رکن پارلیمنٹ وجے گوئل، رکن پارلیمنٹ میناکشی لیکھی اور بی جے پی ترجمان سمبت پاترا کے علاوہ دیگر لیڈران موجود تھے۔ انہوں نے کہا کہ شاہین باغ میں سی اے اے کے خلاف احتجاج ہو رہا ہے۔ وہاں صرف وزیر اعظم نریندرمودی کی مخالفت کی جا رہی ہے۔

وہیں، عام آدمی پارٹی(عآپ)کے قومی کنوینر اور دہلی کے وزیر اعلی اروند کیجریوال نے منگل کو بھارتیہ جنتاپارٹی پر شاہین باغ کے سلسلے میں گندی سیاست کرنے کا الزام لگایا۔ دہلی اسمبلی کے 8 فروری کو انتخابات ہونے ہیں اور نائب وزیراعلی منیش سسودیا کے شاہین باغ کے مظاہرین کی حمایت کرنے کے بیان دینے کے بعد بی جےپی مسلسل عآپ پر زبانی حملہ کر رہی ہے۔ آج بی جے پی صدر جگت پرساد نڈا اور مرکزی وزیر قانون روی شنکر پرساد نے کیجریوال اور سسودیا پر شاہین باغ کے مظاہرین کی حمایت کرنے پر سخت حملہ کیا اور کہا کہ چند سو لوگوں کی وجہ سے لاکھوں کو دقت ہورہی ہے اور دہلی حکومت خاموشی اختیار کئے ہوئے ہے۔


بی جے پی کے دونوں لیڈروں کے بیان کے بعد کیجریوال نے ٹویٹ کیا،’’شاہین باغ میں بند راستے کی وجہ سے لوگوں کو پریشانی ہو رہی ہے۔ بی جےپی نہیں چاہتی کہ راستے کھلیں۔ بی جے پی گندی سیاست کر رہی ہے۔ اس کے لیڈروں کو فوراً شاہین باغ جا کر وہاں بیٹھے لوگوں سے بات کرنی چاہئے اور راستہ کھلوانا چاہئے۔
First published: Jan 27, 2020 03:34 PM IST