ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

عام بجٹ 2017 : کم آمدنی والے لوگوں کو انکم ٹیکس میں معمولی راحت

نئی دہلی۔ حکومت نے کم آمدنی والے لوگوں کو انکم ٹیکس میں معمولی راحت دیتے ہوئے ڈھائی لاکھ سے پانچ لاکھ روپے تک کے سلیب پر ذاتی انکم ٹیکس کی شرح 10 فیصد سے کم کرکے پانچ فیصد کرنے کی تجویز پیش کی ہے۔

  • UNI
  • Last Updated: Feb 01, 2017 03:28 PM IST
  • Share this:
  • author image
    NEWS18-Urdu
عام بجٹ 2017 : کم آمدنی والے لوگوں کو انکم ٹیکس میں معمولی راحت
نئی دہلی۔ حکومت نے کم آمدنی والے لوگوں کو انکم ٹیکس میں معمولی راحت دیتے ہوئے ڈھائی لاکھ سے پانچ لاکھ روپے تک کے سلیب پر ذاتی انکم ٹیکس کی شرح 10 فیصد سے کم کرکے پانچ فیصد کرنے کی تجویز پیش کی ہے۔

نئی دہلی۔  حکومت نے کم آمدنی والے لوگوں کو انکم ٹیکس میں معمولی راحت دیتے ہوئے ڈھائی لاکھ سے پانچ لاکھ روپے تک کے سلیب پر ذاتی انکم ٹیکس کی شرح 10 فیصد سے کم کرکے پانچ فیصد کرنے کی تجویز پیش کی ہے۔ وزیر خزانہ ارون جیٹلی نے آج پارلیمنٹ میں مالی سال 2017-18 کا عام بجٹ پیش کرتے ہوئے کہا کہ نوٹوں کی منسوخی کے بعد تنخواہ پر کام کرنے والوں کو امید تھی کہ ان پر انکم ٹیکس کا بوجھ کم ہوگا۔ حکومت نے ان کی امید پوری کرتے ہوئے ڈھائی لاکھ سے پانچ لاکھ روپے کے سلیب میں انکم ٹیکس کی شرح 10 فیصد سے کم کرکے پانچ فیصد کرنے کی تجویز رکھی ہے۔


 جیٹلی نے کہا کہ اس سے حکومت کو 15،500 کروڑ روپے کی آمدنی کا نقصان ہونے کا اندازہ ہے۔ اس کے جزوی ازالے کے لئے حکومت کی50 لاکھ روپئے سے ایک کروڑ روپے تک کی آمدنی والوں کے لئے انکم ٹیکس پر 10 فیصد سرچارج لگانے کی تجویز ہے۔


First published: Feb 01, 2017 03:28 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading