ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

چھتیس گڑھ : نکسلی تصادم میں 22 جوان ہوئے شہید ، گراونڈ زیرو پر پہنچی نیوز18 کی ٹیم

چھتیس گڑھ کے سکما اور بیجاپور سرحد پر واقع ٹیکل گوڑا کے پاس نکسلیوں کے ساتھ تصادم میں 22 جوانوں کی شہادت کی خبر ہے ۔

  • Share this:
چھتیس گڑھ : نکسلی تصادم میں 22 جوان ہوئے شہید ، گراونڈ زیرو پر پہنچی نیوز18 کی ٹیم
چھتیس گڑھ : نکسلی تصادم میں 20 جوان ہوئے شہید ، گراونڈ زیرو پر پہنچی نیوز18 کی ٹیم

بیجاپور : چھتیس گڑھ کے سکما اور بیجاپور سرحد پر واقع ٹیکل گوڑا کے پاس نکسلیوں کے ساتھ تصادم میں 22 جوانوں کی شہادت کی خبر ہے ۔ جس ٹیکل گوڑا گاوں میں یہ تصادم پیش آیا ، شہید جوانوں کے جسد خاکی ابھی بھی وہیں ہیں ۔ آج صبح جب نیوز18 کی ٹیم گاوں میں پہنچی تو اس واقعہ کی بھیانک تصویریں سامنے آئیں ۔ حالانکہ نیوز ایجنسی اے این آئی کے مطابق سیکورٹی فورسیز کے افسران کے ذریعہ انکاونٹر میں اب تک 16 جوانوں کے شہید ہونے کی تصدیق کی جارہی ہے ۔


آپ کو بتادیں کہ ہفتہ کو ہوئے اس تصادم میں پہلے پانچ جوانون کے شہید ہونے خبر آئی تھی ۔ بتایا گیا تھا کہ نکسلیوں کے ساتھ تصادم میں پانچ جوان شہید ہوئے ہیں جبکہ 21 لاپتہ ہیں ۔ لیکن آج جب نیوز 18 کی ٹیم جائے واقعہ پر پہنچی تو جائے واقعہ پر جوانوں کی لاشوں سے نئی تعداد سمنے آئی ہے ۔ نیوز 18 کی ٹیم کے پاس جائے واقعہ کے ویڈیو فوٹیج بھی موجود ہیں ۔ تصادم کے 24 گھنٹوں کے بعد بھی ابھی تک پولیس کی ٹیم نہیں پہنچی ہے ۔ حالانکہ آج صبح سے ہی لاپتہ جوانوں کی تلاش میں سرچ آپریشن تیز کردیا گیا ہے ۔


نیوز18 کی ٹیم آج صبح جب گراونڈ زیرو پر پہنچی تو وہاں کے مناظر چونکانے والے تھے ۔ ٹیم نے دیکھا کہ گاوں میں نکسلی موجود تھے اور ایک مہوا کے پیڑ کے پاس چھ جوانوں کی لاشیں پڑی ہوئی تھیں ۔ وہیں تھوڑی دور پر مزید تین جوانوں کی لاشیں تھیں اور پاس میں ہی موجود ایک گھر کے نزدیک اور ایک جوان کی لاش پڑی تھی ۔


مقامی لوگوں نے نیوز18 کی ٹیم کو بتایا کہ آگے اور جنگل میں تقریبا 10 جوانوں کی لاشیں موجود ہیں ۔ آپ کو بتادیں کہ سیکورٹی فورسیز کے ساتھ نکسلیوں کا پہلا تصادم گاوں کے پاس پہاڑی پر ہی ہوا تھا ۔ دوسرا تصادم زخمی جوانوں کو لے جاتے وقت ہوا ۔ نکسلیوں نے زخمی جوانوں کو لے جارہی سیکورٹی فورسیز کی ٹیم پر پھر سے گولہ باری شروع کردی تھی ، جس کے جواب میں جوانوں نے بھی فائرنگ کی ۔
Published by: Imtiyaz Saqibe
First published: Apr 04, 2021 12:42 PM IST