ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

طلاق ثلاثہ بل پرراہل گاندھی نے کہا "ہم اپنے موقف پرقائم"۔

کانگریس صدرنے واضح کردیا ہے کہ وہ طلاق ثلاثہ بل کے خلاف ہے اوروہ اس کی مخالفت کرے گی، اس کے موقف میں کوئی تبدیلی نہیں آئی ہے۔

  • Share this:
طلاق ثلاثہ بل پرراہل گاندھی نے کہا
راہل گاندھی: فائل فوٹو

نئی دہلی: طلاق ثلاثہ بل پرکانگریس صدرراہل گاندھی نے کہا ہے کہ  ہماری پارٹی اپنے  موقف(اسٹینڈ) پرقائم ہے۔ انہوں نے ایک بارپھرواضح کردیا ہے کہ کانگریس پارٹی کے موقف میں کوئی تبدیلی نہیں آئی ہے، وہ اس موضوع پرقائم ہے کہ طلاق ثلاثہ بل جوائنٹ سلیکٹ کمیٹی کو بھیجا جائے۔


واضح رہے کہ آج مرکزی حکومت راجیہ سبھا میں اس بل کو پیش کرنا چاہتی ہے۔ تاہم اس سے قبل ہنگامہ آرائی اورشورشرابے کی وجہ سے دو بجے تک کے لئے ملتوی کردی گئی تھی۔ ایوان کی کارروائی اب دوبارہ شروع ہوگئی ہے۔ تاہم کانگریس سمیت تمام اپوزیشن جماعتیں مرکزی حکومت کے بل کے خلاف ہیں اوراس سلسلے میں انہوں نے  بھی اپنا موقف واضح کردیا ہے۔


اس سے قبل آج راجیہ سبھا میں اپوزیشن لیڈر غلام نبی آزاد نے آج پیرکے روز صبح 10 کانگریس ممبران پارلیمنٹ کی میٹنگ طلب کی تھی۔ کئی اپوزیشن جماعتوں کے ارکان نے بھی غلام نبی آزاد سے ملاقات کی۔




واضح رہے کہ تمام نے طلاق ثلاثہ بل پرتبادلہ خیال کیا۔ مانا جارہا ہے کہ تمام اپوزیشن جماعتیں کانگریس کے موقف کے ساتھ ہوں گی۔  غلام نبی آزاد سے ملاقات کرنے والوں میں سماجوادی پارٹی کے قومی جنرل سکریٹری رام گوپال یادو اہم ہیں۔ لوک سبھا میں بھی سماجوادی پارٹی نے تین طلاق بل کی مخالفت کی تھی۔ رام گوپال یادو اس سے قبل بھی کانگریس کے ساتھ کھڑے رہے ہیں۔ اس سے اس بات کا قوی امکان ہے کہ یہ بل راجیہ سبھا میں منظورنہیں ہوسکے گا۔

اس سے قبل تیلگودیشم پارٹی کےسربراہ اورآندھرا پردیش کے وزیراعلیٰ چندرا بابونائیڈو نے پیرکوکہا ہے کہ وہ اپنی اپنی پارٹی کے راجیہ سبھا ممبران پارلیمنٹ سے اپیل کرتے ہیں کہ وہ مسلمانوں کے استحصال کی مخالفت کریں۔ سبھی اپوزیشن جماعتوں کو ایک ساتھ مل کربی جے پی مسلم مخالف رویے کی مخالفت کرنی چاہئے۔ حکومت زبردستی طلاق ثلاثہ قانون تھوپنا چاہتی ہے، جوقومی اتحاد اورسیکولرازم کے لئے خطرہ ہے۔
First published: Dec 31, 2018 02:12 PM IST