ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

اروناچل پردیش میں صدر راج کے خلاف پوری طاقت سے لڑیں گے: کانگریس

نئی دہلی۔ کانگریس نے یوم جمہوریہ پر اروناچل پردیش میں صدر راج نافذ کئے جانے کو نریندر مودی حکومت کی طرف سے جمہوریت کے بنیادی اصولوں کو کچلنے کا قدم قرار دیتے ہوئے کہا کہ وہ اروناچل پردیش میں مرکز کی حکومت کے خلاف پوری طاقت سے لڑے گی۔

  • UNI
  • Last Updated: Jan 27, 2016 08:50 AM IST
  • Share this:
  • author image
    NEWS18-Urdu
اروناچل پردیش میں صدر راج کے خلاف پوری طاقت سے لڑیں گے: کانگریس
نئی دہلی۔ کانگریس نے یوم جمہوریہ پر اروناچل پردیش میں صدر راج نافذ کئے جانے کو نریندر مودی حکومت کی طرف سے جمہوریت کے بنیادی اصولوں کو کچلنے کا قدم قرار دیتے ہوئے کہا کہ وہ اروناچل پردیش میں مرکز کی حکومت کے خلاف پوری طاقت سے لڑے گی۔

نئی دہلی۔  کانگریس نے یوم جمہوریہ پر اروناچل پردیش میں صدر راج نافذ کئے جانے کو نریندر مودی حکومت کی طرف سے جمہوریت کے بنیادی اصولوں کو کچلنے کا قدم قرار دیتے ہوئے  کہا کہ وہ اروناچل پردیش میں مرکز کی حکومت کے خلاف پوری طاقت سے لڑے گی۔ پارٹی کے میڈیا انچارج رندیپ سرجے والا نے ایک بیان میں کہاکہ یوم جمہوریہ کے موقع پر مسٹر مودی نے جمہوریت کے بنیادی اصولوں کو کچل دیا ہے۔ کانگریس اروناچل پردیش میں مرکز کی حکومت کے خلاف پوری طاقت سے لڑے گی۔


خیال رہے کہ اروناچل پردیش میں کل صدر راج نافذ کر دیا گیا ہے۔ صدر پرنب مکھرجی نے اس سلسلے میں مرکزی کابینہ کی تجویز کو منظوری دے دی ہے۔ مرکزی کابینہ نے اروناچل پردیش میں صدر راج نافذ کرنے کی اتوار کو مسٹر مکھرجی سے سفارش کی تھی۔


First published: Jan 27, 2016 08:50 AM IST