உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    سماج وادی پارٹی کے ساتھ فی الحال اتحاد کا کوئی ارادہ نہیں: کانگریس

    نئی دہلی۔  کانگریس نے  واضح کیا ہے کہ سماج وادی پارٹی کے ساتھ فی الحال کسی طرح کی انتخابی مفاہمت کرنے کا اس کا کوئی ارادہ نہیں ہے۔

    نئی دہلی۔ کانگریس نے واضح کیا ہے کہ سماج وادی پارٹی کے ساتھ فی الحال کسی طرح کی انتخابی مفاہمت کرنے کا اس کا کوئی ارادہ نہیں ہے۔

    نئی دہلی۔ کانگریس نے واضح کیا ہے کہ سماج وادی پارٹی کے ساتھ فی الحال کسی طرح کی انتخابی مفاہمت کرنے کا اس کا کوئی ارادہ نہیں ہے۔

    • UNI
    • Last Updated :
    • Share this:

      نئی دہلی۔  کانگریس نے  واضح کیا ہے کہ سماج وادی پارٹی کے ساتھ فی الحال کسی طرح کی انتخابی مفاہمت کرنے کا اس کا کوئی ارادہ نہیں ہے۔ پارٹی ترجمان سشما دیو نے یہاں پارٹی کی بریفنگ میں اخباری نمائندوں کے سوالوں پر کہا کہ ابھی تک کانگریس کا سماج وادی پارٹی کے ساتھ اتحاد یا سمجھوتہ کا کوئی ارادہ نہیں ہے۔ 


      قابل ذکر ہے کہ اترپردیش کے وزیراعلی اکھلیش یادو نے کہا ہے کہ اگر سماج وادی پارٹی کے سربراہ ملائم سنگھ یادو کی وزیراعظم اور کانگریس کے نائب صدر راہل گاندھی کو نائب وزیراعظم بنانے کی بات آتی ہے تو ان کی پارٹی کانگریس کے ساتھ مفاہمت کرنے کو تیار ہے۔ سماج وادی پارٹی اور کانگریس کے درمیان آئندہ عام چناؤ میں اتحاد کے امکانات کے حوالے سے پوچھے گئے سوال پر انہوں نے ایک پروگرام میں کہا ’’ راہل گاندھی ہمارے پرانے ساتھی ہیں کانگریس اگر یہ طے کرتی ہے کہ اتحاد کی جیت پر نیتاجی(ملائم سنگھ) کو ملک کا وزیراعظم اور راہل گاندھی کو نائب وزیراعظم بنایا جائے گا تو اتحاد کے لئے صرف ہاں ہی نہیں ہے بلکہ میں تو چاہوں گا کہ فورا ہی اتحاد قائم ہوجائے۔

      First published: