ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

کانگریس پارٹی سشما سوراج کے خلاف مراعات شکنی کی تحریک پیش کرے گی

کانگریس نے آج پھر الزام لگایا کہ وزیر خارجہ سشما سوراج نے عراق کے موصل میں 39 ہندوستانیوں کے قتل کے معاملہ میں پارلیمنٹ اور ملک کو گمراہ کیا ہے اس لئے پارٹی ان کے خلاف راجیہ سبھا میں مراعات شکنی کی تحریک پیش کرے گی۔

  • UNI
  • Last Updated: Mar 22, 2018 02:48 PM IST
  • Share this:
  • author image
    NEWS18-Urdu
کانگریس پارٹی سشما سوراج کے خلاف مراعات شکنی کی تحریک پیش کرے گی
وزیر خارجہ سشما سوراج: فائل فوٹو

نئی دہلی۔ کانگریس نے آج پھر الزام لگایا کہ وزیر خارجہ سشما سوراج نے عراق کے موصل میں 39 ہندوستانیوں کے قتل کے معاملہ میں پارلیمنٹ اور ملک کو گمراہ کیا ہے اس لئے پارٹی ان کے خلاف راجیہ سبھا میں مراعات شکنی کی تحریک پیش کرے گی۔ کانگریس کے سینئر لیڈر پرتاپ سنگھ باجوا، امبیکا سونی اور شمشیر سنگھ ڈلو نے پارلیمنٹ ہاؤس کے احاطہ میں صحافیوں کو بتایا کہ وزیر خارجہ نے چار سال تک دہشت گرد تنظیم داعش کے ذریعہ یرغمال بنائے گئےہندوستانیوں کے بارے میں صحیح معلومات فراہم نہیں کیں اور پارلیمنٹ اورمتاثرہ کنبہ کے اراکین کو گمراہ کیا ہے اس لئے  سوراج کے خلاف پہلے راجیہ سبھا میں مراعات شکنی کی تحریک پیش کی جائے گی۔


 باجوا نے کہا کہ حکومت نے اس معاملہ میں بہت غیر حساس رول ادا کیا۔ وزیر خارجہ نے ہر مرتبہ کہا کہ تمام ہندوستانی زندہ ہیں۔ یہاں تک دعوی کیا گیا کہ ان کو کھانے جیسی ضروری اشیا مل رہی ہیں۔ راجیہ سبھا میں وزیر خارجہ کے ذریعہ سبھی 39 ہندوستانیوں کی موت کے بارےمیں اطلاع دینے کے بعد ان کے کنبہ کوکافی تکلیف ہوئی ہے جو چار سال سے اپنے اقربا کے واپس آنے کا انتظار کر رہے تھے۔ انہوں نے یرغمال بنائے گئے ہندوستانیوں کے قتل کے لئے حکومت کو ذمہ دار ٹھہرایا اور کہا کہ دہشت گردوں نے دیگر ممالک کے شہریوں کا بھی اغوا کیا تھا لیکن متعدد ملکوں کی حکومتوں نے اپنے لوگوں کو بچایا ہے۔ ہماری حکومت نے اس معاملہ میں ملک کو گمراہ کیا ہے۔


 باجوا نے کہا کہ کانگریس نے اس معاملہ میں وزیر خارجہ کے خلاف مراعات شکنی کی تحریک پیش کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔ یہ سوال کئے جانے پر کہ کیا اسی طرح کی تحریک لوک سبھا میں بھی پیش کی جائے گی تو انہوں نے کہا کہ پہلے راجیہ سبھا میں یہ تحریک لائی جا رہی ہے۔ انہوں نے الزام لگایا کہ حکومت اس معاملہ سے توجہ ہٹانے اور عوام کے سوالوں سے بچنے کے لئے پارلیمنٹ میں کام نہیں ہونے دے رہی ہے۔ انہوں نے حکومت سے متاثر ہ کنبہ کو ایک ایک کروڑ روپیے معاوضہ دینے کا مطالبہ دہرایا اور کہا کہ کنبہ کے ایک فرد کو نوکری ملنی چاہئے۔ انہوں نے کہا کہ پنجاب حکومت ہر کنبہ کو ہر ماہ 20 ہزار روپیے دے رہی ہے اور یہ رقم اس وقت تک دی جائے گی جب تک مرکز کی جانب سے اس بارے میں ٹھوس فیصلہ نہیں کیا جاتا ہے۔


First published: Mar 22, 2018 02:48 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading