ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

کانگریس ورکنگ کمیٹی میٹنگ : سونیا گاندھی نے کہا : مودی حکومت کا کاونٹ ڈاون شروع

میٹنگ میں شریک سابق وزیر اعظم منموہن سنگھ نے ترقی کی رفتار بڑھانے کیلئے فریم ورک بنانے کی جگہ وزیر اعظم مودی کے ذریعہ خود اپنی تعریف کرنے اور جملے گڑھنے کو لے کر تنقید کی ۔

  • Share this:
کانگریس ورکنگ کمیٹی میٹنگ : سونیا گاندھی نے کہا : مودی حکومت کا کاونٹ ڈاون شروع
کانگریس ورکنگ کمیٹی کی میٹنگ جاری ہے ۔

کانگریس صدر راہل گاندھی کی صدارت میں کانگریس ورکنگ کمیٹی کی اتوار کو پہلی میٹنگ ہورہی ہے ۔ میٹنگ میں شریک سابق وزیر اعظم منموہن سنگھ نے ترقی کی رفتار بڑھانے کیلئے فریم ورک بنانے کی جگہ وزیر اعظم مودی کے ذریعہ خود اپنی تعریف کرنے اور جملے گڑھنے کو لے کر تنقید کی ۔ساتھ ہی ساتھ انہوں نے کہا کہ 2022 تک کسانوں کی آمدنی دوگنی کرنے کے دعوی کو پورا کرنے کیلئے زراعت کے شعبہ میں سالانہ 14 فیصد کی شرح ترقی چاہئے ، جو کہیں آس پاس نہیں نظر آرہی ہے۔ کانگریس میڈیا انچارج رندیپ سرجیوالا نے میڈیا کو یہ معلومات فراہم کی ۔

سی ڈبلیو سی کی مزید معلومات فراہم کرتے ہوئے رندیپ سرجیوالا نے بتایا کہ میٹنگ میں سونیا گاندھی نے کہا کہ وزیر اعظم مودی کا بیان ان کی مایوسی کو ظاہر کرتا ہے اور اشارہ دیتا ہے کہ مودی حکومت کا کاونٹ ڈاون شروع ہوچکا ہے ۔ میٹنگ میں سونیا گاندھی نے مزید کہا کہ آر ایس ایس کی تنظیمی مضبوطی اور مالی طاقت سے لڑنے کیلئے اپوزیشن پارٹیوں کو حکمت عملی کی بنیاد پر اتحاد کرنا ہوگا ، اس کیلئے سبھی کو ذاتی خواہشات کو ترک کرنا پڑے گا۔

رندپ سرجیوالا نے بتایا کہ راہل گاندھی نے میٹنگ میں کہا کہ ایک طرف جہاں بی جے پی اداروں ، دلتوں ، آدیواسیوں ، پسماندہ ، اقلیتوں اور غریبوں پر حملے کررہی ہے ، وہیں کانگریس ملک کی آواز بننے کا اپنا رول بخوبی نبھا رہی ہے۔

خیال رہے کہ راہل گاندھی کی قیادت والی سی ڈبلیو سی میں کئی ایسے لیڈروں کو جگہ نہیں دی گئی ہے ، جو سونیا گاندھی کے صدر رہنے کے وقت اس کمیٹی کا حصہ تھے ۔ جناردن دویدی ، دگ وجے سنگھ ، کرن سنگھ ، محسنہ قدوائی ، آسکر فرنانڈیز ، موہن پرکاش اور سی پی جوشی جیسے لیڈروں کا نام اس نئی کمیٹی سے ندارد ہے ۔

سی ڈبلیو سی کے اراکین میں پارٹی صدر راہل گاندھی ، سونیا گاندھی ، سابق وزیر اعظم منموہن سنگھ ، موتی لال ووہرا ، اشوک گہلوت ، غلام نبی آزاد ، ملکاارجن کھڑگے ، اے کے انٹونی ، احمد پٹیل ، امبیکا سونی اور اومن چانڈی کو جگہ دی گئی ہے۔

قابل ذکر ہے کہ یہ میٹنگ ایسے وقت میں ہورہی ہے ، جب دو دن پہلے ہی یعنی 20 جولائی کو پارلیمنٹ میں عدم اعتماد کی تحریک کے دوران کانگریس صدر راہل گاندھی نے وزیر اعظم مودی ، بی جے پی اور آر ایس ایس پر جم کر نشانہ سادھا تھا۔ راہل گاندھی اپنی تقریر کے دوران وزیر اعظم مودی کے خلاف کافی جارحانہ رخ اختیار کرتے ہوئے نظر آئے تھے ۔
First published: Jul 22, 2018 01:34 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading