ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

میرٹھ : میڈیکل کالج کے اسٹاف کی چوک سے کورونا وائرس کا بڑھا خطرہ ، جانئے کیا ہے معاملہ

میڈیکل اسٹاف کا کہنا ہے کہ بچہ صحتمند ہے ، اس وجہ سے اہل خانہ کے سپرد کر دیا گیا ۔ لیکن چیف میڈیکل افسر کا کہنا ہے کہ بغیر جانچ کے بچہ کو کسی بھی شخص کے رابطہ میں لانا انفیکشن کا خطرہ پیدا کرتا ہے ۔

  • Share this:
میرٹھ : میڈیکل کالج کے اسٹاف کی چوک سے کورونا وائرس کا بڑھا خطرہ ، جانئے کیا ہے معاملہ
میرٹھ : میڈیکل کالج کے اسٹاف کی چوک سے کورونا وائرس کا بڑھا خطرہ ، جانئے کیا ہے معاملہ

کورونا انفیکشن متاثر مریضوں سے متعلق گائیڈ لائن کو لیکر میرٹھ میڈیکل کالج کی ایک بڑی لاپروائی سامنے آئی ہے ۔ میڈیکل کالج کے کورونا وارڈ میں زیر علاج حاملہ خاتون نے کل ایک بچے کو جنم دیا تھا ، لیکن نوزائیدہ بچے کی ٹیسٹ رپورٹ آنے سے پہلے ہی میڈیکل اسٹاف نے بچہ کو اہل خانہ کے سپرد کر دیا ۔ گائیڈ لائن کے مطابق نوزائیدہ بچہ کو ٹیسٹ رپورٹ آنے تک نرسری میں رکھا جانا تھا ۔ میڈیکل اسٹاف کی اس لاپروائی سے انفیکشن کا خطرہ پیدا ہو گیا ہے ۔ میڈیکل اسٹاف کی اس چوک پر سی ایم او نے میڈیکل کالج کے پرنسپل سے رپورٹ طلب کی ہے ۔


میرٹھ کے لالہ لاجپت رائے میڈیکل کالج کے کورونا وارڈ میں انفیکشن متاثرہ خاتون کو کچھ روز قبل بھرتی کیا گیا تھا ، جو حاملہ تھی اور گزشتہ روز اس خاتون نے ایک بچے کو جنم دیا ۔ احتیاطی تقاضہ کے تحت بچہ کو ماں سے تو علاحدہ کر دیا گیا ، لیکن لاپروائی برتتے ہوئے بچہ کو اہل خانہ کے سپرد کر دیا گیا ۔ جبکہ ڈبلیو ایچ او کی گائیڈ لائن کے مطابق بچہ کو نرسری میں رکھا جانا تھا اور ٹیسٹ رپورٹ آنے سے قبل بچہ کو اہل خانہ کے سپرد نہیں کیا جانا چاہیے تھا ۔  لیکن میڈیکل اسٹاف کی اس لاپروائی نے بچہ کے اہل خانہ کے لیے بھی انفیکشن کا خطرہ پیدا کر دیا ہے ۔


میڈیکل اسٹاف کا کہنا ہے کہ بچہ صحتمند ہے ، اس وجہ سے اہل خانہ کے سپرد کر دیا گیا ۔ لیکن چیف میڈیکل افسر کا کہنا ہے کہ بغیر جانچ کے بچہ کو کسی بھی شخص کے رابطہ میں لانا انفیکشن کا خطرہ پیدا کرتا ہے اگر بچہ کی جانچ رپورٹ بھی پوزیٹو آتی ہے ۔ سی ایم او نے اس معاملہ میں اب میڈیکل کالج کے پرنسپل سے رپورٹ طلب کی ہے ۔

First published: Apr 26, 2020 12:56 AM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading